உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پورنو گرافی معاملہ: راج کندرا کے موبائل، لیپٹ ٹاپ سے پولیس کو ملے 119 پورن ویڈیو، ڈبل منافع کمانے کا تھا منصوبہ

    پورنو گرافی معاملہ: راج کندرا کے موبائل، لیپٹ ٹاپ سے پولیس کو ملے 119 پورن ویڈیو، ڈبل منافع کمانے کا تھا منصوبہ

    پورنو گرافی معاملہ: راج کندرا کے موبائل، لیپٹ ٹاپ سے پولیس کو ملے 119 پورن ویڈیو، ڈبل منافع کمانے کا تھا منصوبہ

    راج کندرا (Raj Kundra) پورنوگرافی معاملے میں ایک اور بڑا انکشاف ہوا ہے، جس کے مطابق پورنو گرافی معاملے (Pornography Case) میں اہم ملزم راج کندرا کے موبائل اور لیپ ٹاپ سے پولیس کو کئی پورن ویڈیو ملے ہیں۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      ممبئی: پورنو گرافی معاملے میں بالی ووڈ اداکارہ شلپا شیٹی (Shilpa Shetty) کے شوہر اور بزنس مین راج کندرا (Raj Kundra) کو عدالت نے ضمانت دے دی ہے۔ عدالت نے راج کندرا کو 50 ہزار کے مچلکے پر ضمانت دی ہے اور ان کے ساتھ ہی ان کے پارٹنر اور دوست ریان تھورپے (Ryan Thorpe) کو بھی ضمانت مل گئی ہے۔ اس درمیان معاملے میں ایک اور بڑا انکشاف ہوا ہے، جس کے مطابق پورنو گرافی معاملے میں (Pornography Case) اہم ملزم راج کندرا کے موبائل اور لیپ ٹاپ سے پولیس کو کئی پورن ویڈیو ملے ہیں۔

      اے این آئی کے مطابق، پورنو گرافی معاملے کی جانچ میں پولیس کو راج کندرا کے موبائل، لیپ ٹاپ اور ایک ہارڈ ڈسک سے 119 فحش ویڈیو ملے ہیں اور ساتھ ہی یہ بھی پتہ چلا ہے کہ وہ ان ویڈیوز سے زبردست منافع کمانے کی کوشش میں تھے اور ویڈیوز کو 9 کروڑ روپئے میں بیچنے کا منصوبہ بنا رہے تھے۔ تاہم تبھی ایپ پر پابندی لگ گئی۔ ایسے میں راج کندرا نے دوسرا ایپ بھی بنوا لیا تھا، لیکن ان کا یہ منصوبہ ناکام ہوگیا۔

      دراصل، اس معاملے میں ممبئی پولیس کی کرائم برانچ ٹیم نے راج کندرا اور ان کے معاون ریان تھورپے سمیت دو دیگر لوگوں کے خلاف پورن فلم بنانے اور ایپ کے ذریعہ انہیں آن ایئر کرنے کے الزامات میں چارج شیٹ داکل کی تھی، جس کے بعد راج کندرا نے میٹرو پولیٹن کورٹ کا رخ کرلیا تھا۔ انہوں نے ترک دیا تھا کہ معاملے میں جانچ  عملی طور پر ہوچکی ہے۔

       راج کندرا کے موبائل سے پولیس نے 119 پورن ویڈیو ضبط کئے ہیں۔


      واضح رہے کہ راج کندرا پر ہاٹ شاٹس ایپ کے ذریعہ پورن ویڈیو اسٹریم کرائے جانے کا الزام ہے۔ پولیس نے انہیں 19 جولائی کو گرفتار کیا تھا، جس کے بعد اس معاملے میں کئی انکشاف ہوئے۔ تقریباً 2 ماہ تک جیل میں رہنے کے بعد گزشتہ پیر یعنی 20 ستمبر کو ممبئی کی سیشن کورٹ نے انہیں ضمانت دے دی۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: