உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ‘A’ Certificate:رام گوپال ورما کی لسبین پر بنی فلم ہوئی سینسر بورڈ سے پاس، اس دن ہورہی ہے یہ فلم ریلیز

    فلم کی کہانی دو خواتین کے درمیان محبت اور ان کے ہم جنس پرست تعلقات پر مبنی ہے۔ جو لوگ اس مردانہ تسلط والے معاشرے سے غیر مطمئن ہیں وہ ایک دوسرے کی طرف راغب ہوتے ہیں۔ کرائم تھرلر ڈرامہ فلم میں انتہائی بولڈ اور انٹیمیٹ سین شوٹ کیے گئے ہیں۔

    فلم کی کہانی دو خواتین کے درمیان محبت اور ان کے ہم جنس پرست تعلقات پر مبنی ہے۔ جو لوگ اس مردانہ تسلط والے معاشرے سے غیر مطمئن ہیں وہ ایک دوسرے کی طرف راغب ہوتے ہیں۔ کرائم تھرلر ڈرامہ فلم میں انتہائی بولڈ اور انٹیمیٹ سین شوٹ کیے گئے ہیں۔

    فلم کی کہانی دو خواتین کے درمیان محبت اور ان کے ہم جنس پرست تعلقات پر مبنی ہے۔ جو لوگ اس مردانہ تسلط والے معاشرے سے غیر مطمئن ہیں وہ ایک دوسرے کی طرف راغب ہوتے ہیں۔ کرائم تھرلر ڈرامہ فلم میں انتہائی بولڈ اور انٹیمیٹ سین شوٹ کیے گئے ہیں۔

    • Share this:
      ممبئی: رام گوپال ورما (Ram Gopal Varma) اپنی مختلف فلموں کے لیے جانے جاتے ہیں۔ لیکن ان دنوں وہ ایسی فلمیں بنا رہے ہیں جو تنازعات میں گھر سکتی ہے۔ اس کے علاوہ ان کے ٹویٹس بھی اکثر سوشل میڈیا پر چھائے رہتے ہیں۔ ان کی شاید ہی کوئی فلم کچھ عرصے سے ریلیز ہوئی ہو لیکن اب وہ جلد ہی ایک فلم لے کر آرہے ہیں جس کی ریلیز کی تاریخ بھی فائنل کر لی گئی ہے۔ یہ فلم ہم جنس پرستوں پر مبنی ہے۔ آخر کار ہدایتکار رام گوپال ورما کی پہلی ہم جنس پرستی پر بنائی گئی متنازعہ ترین فلم ’خطرہ: ڈینجرس‘(Khatra: Dangerous) سنسر بورڈ سے پاس ہونے کے بعد سینما گھروں میں ریلیز کے لیے تیار ہے۔ ہندوستان میں پہلی بار ہم جنس پرست محبت کی کہانی پر بننے والی رام گوپال ورما کی متنازعہ ترین فلم(Controversial Film)’خطرہ: ڈینجرس‘بالآخر 8 اپریل 2022 کو سینما گھروں کی زینت بننے کے لیے تیار ہے۔

      سینسر بورڈ سے پاس ہوئی رام گوپال ورما کی فلم
      فلم کو اس کے بولڈ موضوع اور خواتین کی ہم جنس پرست محبت کی کہانی کے لیے سنسر بورڈ سے پاس کیے جانے کا انتظار تھا اور پھر ’اے‘سرٹیفکیٹ کے ساتھ، فلم کو سنسر بورڈ نے پاس کیا۔ رام گوپال ورما نے ٹوئٹر کے ذریعے فلم کے پوسٹر پر ریلیز کی تاریخ شیئر کرکے خوشی کا اظہار کیا ہے۔ ایک حالیہ انٹرویو میں، رام گوپال ورما نے کہا تھا کہ ’ہمیں خطرہ: ڈینجرس سے زیادہ توقع نہیں تھی کہ وہ سنسر سے گزرے گا کیونکہ یہ دو خواتین کے درمیان محبت کی کہانی ہے، لیکن دفعہ 377 کی منسوخی کے بعد ہم جنس پرستوں کا رشتہ جائز قرار دیا گیا ہے. میں بہت خوش ہوں کہ خطرہ: ڈینجرس‘پہلی ہندوستانی ہم جنس پرست فلم ہے جسے ’اے‘ سرٹیفکیٹ ملا ہے، اگر اسے ’اے‘ سرٹیفکیٹ نہیں ملتا ہے تو مجھے بہت مایوسی ہوتی۔

      فلم کی کہانی دو خواتین کے درمیان محبت اور ان کے ہم جنس پرست تعلقات پر مبنی ہے۔ جو لوگ اس مردانہ تسلط والے معاشرے سے غیر مطمئن ہیں وہ ایک دوسرے کی طرف راغب ہوتے ہیں۔ کرائم تھرلر ڈرامہ فلم میں انتہائی بولڈ اور انٹیمیٹ سین شوٹ کیے گئے ہیں۔ فلم میں جنوبی فلموں کی ہاٹ سائرن اپسرا رانی اور نینا گنگولی مرکزی کردار میں ہیں۔

      لیسبین پر مبنی ہے فلم کی کہانی

      اب تو وقت ہی بتائے گا کہ رام گوپال ورما کی فلم کو باکس آفس پر کتنا پسند کیا جاتا ہے، لیکن ایسی فلموں کو پسند کرنے والوں کا ایک خاص طبقہ ہی ہے۔ پہلے رام گوپال ورما بہت اچھے مواد پر فلمیں بناتے تھے لیکن اب انہوں نے اپنا ٹریک بالکل بدل لیا ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: