ہوم » نیوز » انٹرٹینمنٹ

ملک کے حالات دیکھ کر لگتا ہے کہ ہم سیکولرزم سے دور جا رہے ہیں: سیف علی خان

سیف علی خان نے ملک کے موجودہ حالات پر بھی اپنی رائے پیش کی اور کہا کہ ’ فی الحال ملک میں جو ماحول ہے، اسے دیکھ کر دکھ ہوتا ہے‘۔

  • Share this:
ملک کے حالات دیکھ کر لگتا ہے کہ ہم سیکولرزم سے دور جا رہے ہیں: سیف علی خان
سیف علی خان: فائل فوٹو

ممبئی۔ بالی ووڈ (Bollywood) اداکار سیف علی خان (Saif Ali Khan) کی فلم ’ تانہاجی: انسنگ وارئیر‘  (Tanhaji: Unsung Warrior) باکس آفس پر دھمال مچا رہی ہے۔ ان کے رول کا موازنہ پدماوت کے علاؤالدین خلجی کے رول سے کیا گیا۔ سیف نے حال ہی میں دئیے اپنے ایک انٹرویو میں کہا کہ اس فلم میں تاریخ کو توڑ مروڑ کر پیش کیا گیا اور اسے لے کر انہیں افسوس رہے گا۔ اس کے ساتھ ساتھ انہوں نے ملک کی موجودہ صورت حال اور سیاسی معاملوں پر بھی اپنی رائے ظاہر کی۔


اداکار سیف علی خان نے صحافی انوپما چوپڑا کو دئیے ایک انٹرویو میں کہا کہ فلم میں جو دکھایا گیا ہے وہ تاریخ نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ ’ تاریخ کیا ہے، میں اسے جانتا ہوں لیکن اگر کوئی کہے کہ فلم میں جو دکھایا گیا ہے وہ تاریخ ہے تو میں اسے نہیں مانتا‘۔





پچھلے کافی وقت سے سیف جس سوال سے بچ رہے تھے، انہوں نے اس بار اس سوال پر اپنی رائے رکھی۔ انہوں نے ملک کے موجودہ حالات پر بھی اپنی رائے پیش کی اور کہا کہ ’ فی الحال ملک میں جو ماحول ہے، اسے دیکھ کر دکھ ہوتا ہے‘۔



ملک کے موجودہ حالات پر انہوں نے پہلی بار اپنی بات رکھتے ہوئے کہا کہ ملک کے حالات کو دیکھ کر لگتا ہے کہ ہم سیکولرزم سے دور جا رہے ہیں اور مجھے کوئی بھی اس کے لئے لڑتا دکھائی نہیں دے رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایک اداکار ہونے کے ناطے میرے لئے کوئی بھی موقف اختیار کرنا درست نہیں ہے کیونکہ اس سے فلموں پر پابندی لگ سکتی ہے اور کاروبار پر اثر پڑتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اسی لئے فلم صنعت کے لوگ اپنے کاروبار اور کنبے کو خطرے میں ڈالنا نہیں چاہتے اور کوئی بھی سیاسی تبصرہ کرنے سے بچتے ہیں۔
First published: Jan 20, 2020 11:18 AM IST