உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سیف علی خان کی بہن صبا نے کنبہ کی نایاب تصویر شیئر کی ، کچھ اس طرح نظر آئی سارا علی خان

    سیف علی خان کی بہن صبا نے کنبہ کی نایاب تصویر شیئر کی ، کچھ اس طرح نظر آئی سارا علی خان (photo: Instagram/sabapataudi)

    سیف علی خان کی بہن صبا نے کنبہ کی نایاب تصویر شیئر کی ، کچھ اس طرح نظر آئی سارا علی خان (photo: Instagram/sabapataudi)

    حال ہی میں صبا نے اپنے انسٹاگرام اکاونٹ پر اپنی بھتیجی اور بھتیجے سارا علی خان ، انایا ، ابراہیم اور تیمور علی خان کی بچپن کی اندیکھی تصویروں کی ایک سیریز تیار کرکے شیئر کی ہے ۔ انہوں نے اس ویڈیو کو کیپشن دیا ہے یادیں ۔ میری کھینچی گئی تصویریں ۔

    • Share this:
      سیف علی خان کی بہن صبا علی خان کا سوشل میڈیا اکاونٹ کبنہ کے اراکین کی نایاب اور اندیکھی تصویروں اور ویڈیوز سے بھرا پڑا ہے ۔ یہ اس فلمی کنبہ کے فینس کیلئے کسی خزانے سے کم نہیں ہے ۔ اس میں ان کے والد مرحوم منصور علی خان پٹودی ، ماں شرمیلا ٹیگور ، ان کے بھائی سیف علی خان ، ان کی بھابھی کرینہ کپور خان ، سارا علی خان ، انایا ، ابراہیم اور تیمور علی خان شامل ہیں ۔

      حال ہی میں صبا نے اپنے انسٹاگرام اکاونٹ پر اپنی بھتیجی اور بھتیجے سارا علی خان ، انایا ، ابراہیم اور تیمور علی خان کی بچپن کی اندیکھی تصویروں کی ایک سیریز تیار کرکے شیئر کی ہے ۔ انہوں نے اس ویڈیو کو کیپشن دیا ہے یادیں ۔ میری کھینچی گئی تصویریں ۔



       




      View this post on Instagram





       

      A post shared by Saba (@sabapataudi)





      فینس نے صبا کے ویڈیو کے کمنٹ سیکشن میں جاکر تابڑتوڑ کمنٹ کئے ۔ ویڈیو دیکھ کر ایک فین نے کمنٹ کیا : ابرہیم اور ان کے داد کی تصویر ۔ ایک دوسرے یوزر نے لکھا : آپ نے انتہائی خاص تصویر شیئر کی ہیں ۔ ایک اور نے لکھے لولی۔

      (photo: Instagram/sabapataudi)
      (photo: Instagram/sabapataudi)


      کچھ دنوں پہلے صبا نے اپنے انسٹاگرام فیڈ پر اداکارہ سارا علی خان کی گلابی سلوار قمیض میں ان کے بچپن کی اندیکھی تصویریں شیئر کی تھیں ۔ صبا نے اپنے انسٹاگرام فالوورس کے ساتھ کوئز بھی کھیلا اور ان سے یہ اندازہ لگانے کیلئے کہا کہ تصویر میں کون ہے ۔ انہوں نے خوبصورت کو کیپشن دیا ۔ آئی ونڈر ، یہ کون ہے ؟ میری کھیچی گئی تصویر ۔ فینس سارا کو گلابی ڈریس میں دیکھ کر جم کر کمنٹس کررہے ہیں ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: