உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Jacqueline Fernandez سے دہلی پولیس کے EOW کی پوچھ۔گچھ، تمام سوالات کے درہی ہیں ون ٹو ون جواب

    معلومات کے مطابق، سکیش نے جیکلین  کو 10 کروڑ روپے سے زیادہ کے قیمتی تحائف دیے ہیں۔ سکیش نے نہ صرف جیکلین  کو بلکہ ان کے گھر والوں کو بھی مہنگے تحائف دیے تھے۔

    معلومات کے مطابق، سکیش نے جیکلین کو 10 کروڑ روپے سے زیادہ کے قیمتی تحائف دیے ہیں۔ سکیش نے نہ صرف جیکلین کو بلکہ ان کے گھر والوں کو بھی مہنگے تحائف دیے تھے۔

    معلومات کے مطابق، سکیش نے جیکلین کو 10 کروڑ روپے سے زیادہ کے قیمتی تحائف دیے ہیں۔ سکیش نے نہ صرف جیکلین کو بلکہ ان کے گھر والوں کو بھی مہنگے تحائف دیے تھے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi, India
    • Share this:
      دہلی پولیس کی ای او ڈبلیو (EOW) بالی ووڈ اداکارہ جیکلین فرنانڈیز سے ایک بار پھر پوچھ گچھ کرے گی۔ EOW نے آج دوبارہ  جیکلین فرنانڈیز کو پوچھ گچھ کے لیے بلایا ہے۔ ان کے نام پر سمن جاری کیا گیا ہے۔ مہاٹھگ سکیش چندر شیکھر سے متعلق 200 کروڑ کی دھوکہ دہی کے معاملے میں دہلی پولیس کیEOW جیکلین فرنانڈیز تک پہنچی ہے اور وہ EOW کے 'ون ٹو ون' تمام سوالوں کے جواب دیں گی۔ اس سے پہلے بھی 14 ستمبر کو جیکلین سے پوچھ گچھ ہوئی تھی۔

      معلومات کے مطابق، سکیش نے جیکلین  کو 10 کروڑ روپے سے زیادہ کے قیمتی تحائف دیے ہیں۔ سکیش نے نہ صرف جیکلین  کو بلکہ ان کے گھر والوں کو بھی مہنگے تحائف دیے تھے، جن میں ایک کار، قیمتی سامان کے علاوہ 1.32 کروڑ روپے اور 15 لاکھ روپے شامل تھے۔ اگر میڈیا رپورٹس پر یقین کیا جائے تو دہلی پولیس ان سے مہنگے تحائف کے علاوہ سکیش اور ان کے درمیان تعلقات کے بارے میں جاننے کی کوشش کرے گی۔

      Salman Khanکو مارنے کیلئے لارینس بشنوئی گینگ نے تیار کیا تھا پلانB، دو بار حملہ ۔۔۔۔

      بالی ووڈ اداکارہ Jacqueline Fernandez کیلئے سکیش نے سری لنکا۔بحرین میں خریدا تھا بنگلہ، جوہو میں بھی بک کیا تھا گھر!



      EOW ذرائع کے مطابق جیکلین  پوچھ گچھ میں شامل ہونے کے لیے دوپہر 2 بجے کے قریب آئیں لیکن جیکلین کی ڈریس ڈیزائنر لپاکشی آج EOW کے سامنے پیش نہیں ہوں گے۔ لپاکشی نے EOW پر زور دیا ہے کہ ان کی صحت خراب ہے۔ اس لیے وہ آج پوچھ گچھ میں شریک نہیں ہو سکیں گی۔ دراصل EOW کی ٹیم لپاکشی اور جیکولین سے آمنے سامنے بیٹھ کر پوچھ گچھ کرنا چاہتی تھی۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: