உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Malaika Arora Angry:جب اس بات پر بھڑک گئی تھیں ملائیکہ اروڑا، کہا تھا-مجھے سلمان خان نے نہیں بنایا، میں سیلف میڈ ہوں‘

    سلمان خان اور ملائیکہ اروڑہ۔

    سلمان خان اور ملائیکہ اروڑہ۔

    Malaika Arora Angry: بتادیں کہ آج ارباز خان اور ملائکہ دونوں اپنی اپنی زندگی میں سیٹل ہیں۔ جہاں ملائکہ اداکار ارجن کپور کے ساتھ سنجیدہ تعلقات میں ہیں وہیں ارباز خان اطالوی ماڈل جارجیا اینڈریانی کو ڈیٹ کر رہے ہیں۔

    • Share this:
      Malaika Arora Angry: ملائکہ اروڑا اپنی پروفیشنل لائف سے زیادہ اپنی ذاتی زندگی کی وجہ سے بحث میں رہتی ہیں۔ آپ کو بتا دیں کہ ملائکہ نے اداکار ارباز خان سے سال 1998 میں شادی کی تھی۔ یہ شادی 19 سال تک چلی جس کے بعد ارباز اور ملائکہ میں طلاق ہو گئی۔ اس شادی سے ملائکہ کے گھر بیٹے ارہان خان نے بھی جنم لیا۔ ملائیکہ انڈسٹری میں اپنے بہترین رقص کی مہارت کے لیے جانی جاتی ہیں۔ فلم 'دل سے' کا گانا 'چھیاں-چھیاں' ہو یا فلم 'دبنگ' کا آئٹم نمبر 'منی بدنام ہوئی'، ملائکہ کا جادو ناظرین پر خوب چلا۔

      تاہم اس کے باوجود ملائکہ کو ایک بار کہنا پڑا کہ انہیں سلمان خان نے نہیں بنایا بلکہ وہ خود بنی ہیں۔ درحقیقت بالی ووڈ میں 'ڈرامہ کوئین' کے نام سے مشہور راکھی ساونت نے ایک بار کہا تھا کہ ملائیکہ کو سلمان خان کے خاندان سے تعلق کی وجہ سے 'آئٹم گرل' نہیں کہا گیا لیکن اس بات سے بھی انکار نہیں کیا جا سکتا کہ انہیں انڈسٹری میں مواقع زیادہ اس لئے ملے کیونکہ ان کا تعلق خان فیملی سے تھا۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Malaika's Expensive Style Game: ایکسیڈنٹ کے بعد ملائکہ اروڑہ نے کی بے حد اسٹائلش واپسی

      راکھی ساونت کے اس بیان پر اپنا ردعمل دیتے ہوئے ملائکہ نے غصے سے کہا تھا، 'اگر ایسا ہوتا تو مجھے سلمان خان کی ہر فلم میں آئٹم نمبر کرنا چاہیے، خاص طور پر ان فلموں میں جن میں سلمان کی اسپیشل اپیئرنس ہے'۔ ملائیکہ کا مزید کہنا تھا کہ 'مجھے سلمان خان نے نہیں بنایا بلکہ میں سیلف میڈ ہوں'۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Priyanka Chopra Insult:جب اس فلم ڈائریکٹر نے ایوارڈشومیں پرینکاکوکہہ دی تھی ایسی بات کہ۔۔۔

      آپ کو بتادیں کہ آج ارباز خان اور ملائکہ دونوں اپنی اپنی زندگی میں سیٹل ہیں۔ جہاں ملائکہ اداکار ارجن کپور کے ساتھ سنجیدہ تعلقات میں ہیں وہیں ارباز خان اطالوی ماڈل جارجیا اینڈریانی کو ڈیٹ کر رہے ہیں۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: