உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Sushant Singh Rajput Birth Anniversary : جب سشانت سنگھ راجپوت کے سوالوں نے دھونی کا صبر کا پیمانہ ختم کردیا تھا، ایکٹر کا جذبہ دیکھ دنگ رہ گئے تھے ماہی

    ایک انٹرویو میں مہندر سنگھ دھونی نے کہا تھا کہ دوسری میٹنگ مین سشانت ایک کے بعد ایک سوال پوچھے جارہے تھے، جن کے جواب دیتے ہوئے وہ تنگ آنے لگے، دھونی نے یہ بھی کہا تھاکہ سشانت ایسے تھے کہ پیچھے پیچھے انہیں فالو کرتے تھے، وہ جہاں بھی جاتے پیچھے شدت کے ساتھ سشانت کھڑے رہتے۔

    ایک انٹرویو میں مہندر سنگھ دھونی نے کہا تھا کہ دوسری میٹنگ مین سشانت ایک کے بعد ایک سوال پوچھے جارہے تھے، جن کے جواب دیتے ہوئے وہ تنگ آنے لگے، دھونی نے یہ بھی کہا تھاکہ سشانت ایسے تھے کہ پیچھے پیچھے انہیں فالو کرتے تھے، وہ جہاں بھی جاتے پیچھے شدت کے ساتھ سشانت کھڑے رہتے۔

    ایک انٹرویو میں مہندر سنگھ دھونی نے کہا تھا کہ دوسری میٹنگ مین سشانت ایک کے بعد ایک سوال پوچھے جارہے تھے، جن کے جواب دیتے ہوئے وہ تنگ آنے لگے، دھونی نے یہ بھی کہا تھاکہ سشانت ایسے تھے کہ پیچھے پیچھے انہیں فالو کرتے تھے، وہ جہاں بھی جاتے پیچھے شدت کے ساتھ سشانت کھڑے رہتے۔

    • Share this:
      ممبئی: Sushant Singh Rajput Birth Anniversary : سشانت سنگھ راجپوت (Sushant Singh Rajput) نے اپنے دم پر ایک عام انسان سے خاص بننے تک کا سفر طئے کیا تھا۔ لیکن جلد ہی سشانت سب چھوڑ کر دنیا کو الوداع کہہ گئے تھے۔ سشانت کیموت کی خبر نے فینس سے لے کر پوری بالی ووڈ انڈسٹری (Sushant Singh Rajput Death) کو ہلا کر رکھ دیا تھا۔ آج بھی فینس کو سشانت کی کمی محسوس ہوتی ہے لیکن ان کی یادیں آج بھی ان کے چاہنے والوں کے ساتھ ہے۔ آج سشانت سنگھ راجپوت کی سالگرہ ہے۔ 21 جنوری کو پٹنہ، بہار میں پیدا ہوئے سشانت راجپوت سے جڑا ایک قصہ ہے۔ جب سشانت اپنی فلم ’ایم ایس دھونی‘ کے لئے تیار ہورہے تھے۔

      سشانت کی لگن دیکھ کر ماہی ہوگئے تھے حیران
      اس وقت اصلی ماہی یعنی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان مہندر سنگھ دھونی (Mahendra Singh Dhoni) بھی اُن سے ایک وقت میں پریشان ہوگئے تھے۔ پریشانی کی وجہ تھی سشانت کے پرتجسس سوالات۔ اصل میں سشانت جب فلم کے لئے اپنے کریکٹر کو پلے کرنے کی تیاریاں کررہے تھے، اس وقت وہ دھونی سے تقریباً 3 مرتبہ ملے تھے۔ اس وقت دھونی نے بتایا تھا کہ سشانت جب پہلی مرتبہ اُن سے ملے تھے تب وہ کافی چپ چاپ سے تھے، وہ سن رہے تھے جو بولا جارہا تھا۔ لیکن اس کے بعد جو اگلی دو ملاقاتیں ہوئیں اس میں سشانت سنگھ نے ماہی کے پیچھے سوالوں کی لائن لگادی تھی، جن سے مہندر سنگھ دھونی بہت پریشان ہوگئے تھے۔

      کیا کہا تھا دھونی نے؟
      ایک انٹرویو میں مہندر سنگھ دھونی نے کہا تھا کہ دوسری میٹنگ مین سشانت ایک کے بعد ایک سوال پوچھے جارہے تھے، جن کے جواب دیتے ہوئے وہ تنگ آنے لگے، دھونی نے یہ بھی کہا تھاکہ سشانت ایسے تھے کہ پیچھے پیچھے انہیں فالو کرتے تھے، وہ جہاں بھی جاتے پیچھے شدت کے ساتھ سشانت کھڑے رہتے۔ ایسے میں ماہی کا صبر جواب دے گیا، انہوں نے سشانت سے کہا تھا۔ یار تم سوال بہت پوچھتے ہو۔ دھونی نے آگے کہا تھا، ’میں سشانت سنگھ کے جذبے سے بہت متاثر تھا، ان کی لگن دیکھ کر میں دنگ رہ گیا تھا۔‘

      34 سال کی عمر میں سشانت دنیا کو کہہ گئے تھے الوداع
      بتادیں کہ، 14 جون 2020 کو سشانت سنگھ ممبئی کے باندرہ علاقے میں واقع اپنے فلیٹ میں مردہ پائے گئے تھے۔ اچانک یوں دنیا سے چلے جانے کے بعد سشانت کے فینس میں غم کی لہر دوڑ گئی تھی۔ وہیں پوری فلم انڈسٹری اس خبر سے سکتے میں تھی۔

      اس وقت سشانت کی موت پر کئی طرح کے سوال اٹھے تھے۔ سشانت کے افراد خاندان اور اُن کے فینس سشانت کی موت کو خودکشی نہ مانتے ہوئے اس پر قتل کا شک ظاہر کرچکے ہیں۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: