ہوم » نیوز » Explained

Explained:آکسیجن اوربستروں کی کمی، Crowdfunding Campaigns کیسے کررہے ہیں کام

حکومت اور صحت کی دیکھ بھال کرنے والے حکام حالات کو قابو میں رکھنے کے لئے پوری کوشش کر رہے ہیں۔ وہیں کئی تنظیمیں اور جماعتیں عام لوگوں کی مدد کے لیے آگے آرہے ہیں۔ جن میں ایکٹ گرانٹس (ACT Grants)، زوماٹو (Zomato)، پے ٹی ایم (Paytm) اور سواستھ ایپ (Swasth App) وغیرہ پیش پیش ہے۔

  • Share this:
Explained:آکسیجن اوربستروں کی کمی، Crowdfunding Campaigns کیسے کررہے ہیں کام
علامتی تصویر

ہندوستان میں کووڈ۔19 وبا کی دوسری لہر کی وجہ سے کئی لوگ اپنے قریب ترین عزیزوں اور رشتہ داروں کو کھو رہے ہیں۔ ایسے میں ملک میں صحت کی دیکھ بھال کرنے والے پیشہ ور افراد اور انفراسٹرکچر پر ناقابل تصور دباؤ پڑ رہا ہے۔


حکومت اور صحت کی دیکھ بھال کرنے والے حکام حالات کو قابو میں رکھنے کے لئے پوری کوشش کر رہے ہیں۔ وہیں کئی تنظیمیں اور جماعتیں عام لوگوں کی مدد کے لیے آگے آرہے ہیں۔ جن میں ایکٹ گرانٹس (ACT Grants)، زوماٹو (Zomato)، پے ٹی ایم (Paytm) اور سواستھ ایپ (Swasth App) وغیرہ پیش پیش ہے۔


ایکٹ گرانٹس (ACT Grants):


ندوستان میں مارچ 2020 میں کورونا وائرس کا سب سے پہلا واقعہ سامنے آیا تو ایکٹ گرانٹس نے ملک میں 50000 آکسیجن اور سلنڈروں کی تعیناتی کی مدد سے اسپتالوں کی مدد کی۔ یہ https://actgrans.in/donate/ پر عطیات قبول کررہا ہے۔


زوماٹو (Zomato):

آن لائن فوڈ ڈیلیوری پلیٹ فارم اپنے منافع بخش فیڈنگ انڈیا کے ذریعے اسپتالوں اور آکسیجن اور دیگر طبی سامان کے مریضوں کی مدد کر رہا ہے۔

زوماٹو نے شدید طبی آکسیجن کی کمی کو دور کرنے کے لئے لاجسٹک فرم دیلیوری کے ساتھ شراکت کی ہے۔ زوماٹو کے بانی دیپندر گوئل نے بھی اس کے بارے میں ٹویٹ کیا۔

پے ٹی ایم (Paytm):

پے ٹی ایم فاؤنڈیشن نے کہا ہے کہ وہ ملک بھر میں صحت کے اداروں کے لئے رقم جمع کررہا ہے۔ یہ ملک میں آکسیجن گاڑھوں کی فراہمی کے لئے افراد کے ذریعہ چندہ کی گئی رقم سے عطیہ کررہا ہے۔

سواستھ ایپ (Swasth App):

ٹیلی میڈیسن ایپ نے متعدد پلیٹ فارمز میں فنڈنگ ​​مہم بھی شروع کردی ہے تاکہ ملک بھر کے اسپتالوں کو آکسیجن کی تیزی سے رسائی حاصل ہوسکے۔ تفصیلات تک رسائی حاصل کی جاسکتی ہے۔ http://www.swasth.app/home

ہیم کنٹ فاؤنڈیشن (Hemkunt Foundation):

گڑگاؤں میں واقع غیر سرکاری تنظیم اپنے رضاکاروں کے نیٹ ورک کے ذریعے کووڈ۔19 کے مریضوں کو آکسیجن سلنڈر تقسیم کررہی ہے۔

گیوانڈیا فاؤنڈیشن (Give India Foundation):

گیوانڈیا فاؤنڈیشن : گیو انڈیا کی جانب سے کوویڈ مریضوں کو مفت آکسیجن سلنڈر سپلائی کرکے مدد کی جارہی ہے۔ انہیں اس خدمات کی تعاون پیش کرنے والے خواہش مند افراد کے لئے تفصیلات ٹویٹ کی گئی ہیں۔


ملاپ(Milaap):

ملاپ: این جی او پوری دہلی میں کوڈڈ مریضوں کے لئے فوڈ سپورٹ پروگرام چلا رہی ہے۔ یہ بے گھر افراد کو روزانہ ایک ہزار کھانے کے پیکٹ فراہم کررہی ہے۔ عطیہ کی تفصیلات کے لیے www.milaap.org کا مشاہد ہ کیجئے

ڈیموکریسی پیپلز فاؤنڈیشن(Democracy People Foundation):

ڈیموکریسی پیپلز فاؤنڈیشن: ڈیموکریسی پیپلز فاؤنڈیشن نے اپنی ہی سرمایہ کاری کے ذریعہ ملک کے اسپتالوں کو آکسیجن کمی کے دوران فوری راحت فراہم کرنے کا کام شروع کیا۔ڈیموکریسی پیپلز فاؤنڈیشن کے بانی ، راہل اگروال نے کہا کہ دیکھتے دیکھتے آکسیجن کی مانگ میں اضافہ ہوتاگیاہے۔جس کے بعد انہیں فنڈ ریزرکی مدد حاصل کرنی پڑی ۔ یہاں کلک کرکے فنڈ ریزر تک پہنچا جاسکتاہے۔


کے وی این فاؤنڈیشن(KVN Foundation):

کے وی این فاؤنڈیشن:بزنس مین اور سرمایہ کار کے گنیش کی جانب سےقائم کردہ ، کے وی این فاؤنڈیشن نے بنگلورو اور ممبئی میں ضرورت مندوں کو آکسیجن فراہم کرنے کے لئے مشن ملین ایئر انیشی ایٹو شروع کیا ہے۔ اس نے اس کے لئے پورٹیا اور ریزر پے کے ساتھ شراکت داری کی ہے اور وہ عطیات طلب کررہے ہیں
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: Apr 29, 2021 10:43 AM IST