ہوم » نیوز » Explained

انڈیا وانٹس کرپٹو IndiaWantsCrypto# مہم کے ہزار دن کی تکمیل، یہاں دیکھیں اہم جھلکیاں

یکم نومبر 2018 کو وزیر ایکس کے سی ای او نیسچل شیٹی نے ٹوئٹر پر #IndiaWantsCrypto کے نام سے ایک مہم شروع کی۔ اس مہم کے تحت نیسچل نے ہر روز ایک ٹویٹ پوسٹ کرنا شروع کیا، جس میں دلچسپ حقائق سے لے کر کرپٹو کرنسیوں کے بارے میں منفرد معلومات شامل ہیں-

  • Share this:
انڈیا وانٹس کرپٹو IndiaWantsCrypto# مہم کے ہزار دن کی تکمیل، یہاں دیکھیں اہم جھلکیاں
علامتی تصویر۔Shutterstock

وزیر ایکس WazirX کو تین نوجوان ٹیک انٹرپرینیورز نیسچل شیٹھی Nischal Shetty، سمیر مہترے Sameer Mhatre اور سدھارتھ مینن Siddharth Menon نے مارچ 2018 میں لانچ کیاتھا۔ اپنے قیام کے تین ہفتوں کے اندر ہی خبر آئی کہ آر بی آئی نے بینکوں سے کہا ہے کہ وہ کرپٹو کرنسی ایکسچینج cryptocurrency exchanges بند کردیں۔ ہندوستان میں مؤثر طریقے سے کرپٹو کرنسیوں پر پابندی لگائیں۔ یہ کاروباری افراد کے لیے ایک سخت صدمہ تھا لیکن اس کو چھوڑنے کے بجائے وہ جدت طرازی کے موڈ میں آگئے اور اس نے کریپٹوکرنسی تجارتی پلیٹ فارم لانچ کیا۔ وہیں انڈیا وانٹس کرپٹو #IndiaWantsCrypto مہم بھی شروع کی۔


یکم نومبر 2018 کو وزیر ایکس کے سی ای او نیسچل شیٹی نے ٹوئٹر پر #IndiaWantsCrypto کے نام سے ایک مہم شروع کی۔ اس مہم کے تحت نیسچل نے ہر روز ایک ٹویٹ پوسٹ کرنا شروع کیا، جس میں دلچسپ حقائق سے لے کر کرپٹو کرنسیوں کے بارے میں منفرد معلومات شامل ہیں۔ یہ خیال صنعت کے بارے میں آگاہی پیدا کریں اور پالیسی سازوں کو اس صنعت کو باقاعدہ بنانے کے لئے متاثر کریں، جس سے ہزاروں ملازمتیں پیدا ہوں اور معاشی قدر میں وسعت پیدا ہو۔

پہلا دن: شیٹھی نے ٹویٹر پر اس وقت کے وزیر خزانہ ارون جیٹلی اور وزیر اعظم کے دفتر کو ٹیگ کیا ، حکومت پر زور دیا کہ وہ کرپٹو کرنسی کے لیے مثبت ضابطہ لائے۔ ’’ہندوستان کے نوجوانوں نے دولت کمانے کا ایک نیا طریقہ ڈھونڈ لیا ہے اور یہ خاص طور پر اس وقت اہم ہے جب ہر ایک کے لیے کافی روزگار نہ ہو‘‘۔ شیٹھی نے اپنے پیروکاروں پر بھی زور دیا کہ وہ وزراء ، میڈیا افراد ، کرپٹو سرمایہ کاروں اور کسی اور کو بھی ٹیگ کریں جو مدد کرنے کے قابل ہو۔ انہوں نے لکھا کہ ’’ہمیں جواب ملنے تک ٹویٹ کرنے کی ضرورت ہے‘‘۔


100 واں دن: ہیش ٹیگ #IndiaWantsCrypto پر 1.5 ملین سے زیادہ لوگوں نے دلچسپی لی۔ یہ دن 100 ہے۔ ہمیں ہر روز اپنے وزیر کو ٹویٹ کرنے کی ضرورت ہے یہاں تک کہ ہمیں جواب مل جائے۔ شیٹھی نے لکھا کہ ’’ہم جتنا زیادہ ٹویٹ کرتے ہیں، ہماری آواز سننے کے امکانات اتنے ہی زیادہ ہوتے ہیں‘‘۔

دن 200: یہاں تک کہ جب یہ مہم مزید تقویت حاصل کرتی رہی، اس کے باوجود بھی حکومت کی جانب سے اس بارے میں کوئی لفظ نہیں ملا کہ آیا وہ اپنے پالیسی موقف کا خاکہ پیش کرنے کا ارادہ کررہی ہے یا نہیں۔ این ڈی اے حکومت کو دوبارہ اقتدار میں آنے کے وقت شیٹھی نے 20 مئی 2019 کو دن 200 پر لکھا کہ ’’ہمیں ابھی تک اپنے وزراء سے کوئی جواب نہیں ملا‘’۔ جلد ہی یہ دن 300 تھا اور ابھی تک کسی قانون ساز کی جانب سے کوئی ردعمل سامنے نہیں آیا۔

303 واں دن: راجیو چندرا شیکھر جنہیں بعد میں مرکزی وزیر برائے مہارت ترقی اور انٹرپرینیورشب، الیکٹرانکس اور انفارمیشن ٹکنالوجی مقرر کیا گیا، انھوں نے شیٹی سے براہ راست پیغام کے ذریعے ان تک پہنچنے کو کہا۔

365 واں دن: یکم نومبر 2019 مہم نے 1 لاکھ سے زیادہ ریٹویٹس اور لائیکس حاصل کیے۔ شیٹھی نے ٹویٹ کیا کہ ’’ہم نے کچھ کاروباری افراد سے ملاقات کی ہے لیکن ہمیں ابھی تک اپنے وزیر اعظم اور ایف ایم سے کوئی جواب نہیں ملا‘‘ اسی وقت سپریم کورٹ ہندوستان میں کرپٹو کرنسیوں پر آر بی آئی کی مؤثر پابندی کی قانونی حیثیت سے متعلق کیس کی سماعت کر رہی تھی۔

دن 489: 4 مارچ 2020 کو ہندوستان کی سپریم کورٹ (ایس سی) نے 2018 کے آر بی آئی سرکلر کو الگ کر دیا، جس سے ہندوستان میں کرپٹو کرنسی لین دین کی اجازت دی گئی۔ سپریم کورٹ کے اس فیصلے کے بعد بھی ہندوستان میں کریپٹو کرنسیوں پر کوئی قانون موجود نہیں تھا۔ سپریم کورٹ نے حکومت سے بھی درخواست کی کہ وہ کریپٹو کرنسیوں سے متعلق ایک قانون لائے ، جس سے اسٹیک ہولڈرز کو اس جگہ سے نمٹنے کے طریقوں سے متعلق مزید وضاحت میں مدد ملے گی۔ ایک کرپٹو سرمایہ کار شریر پارشر Shrikar Parashar نے آر بی آئی آفس کے سامنے ایک پوسٹر لگایا جس میں #IndiaWantsCrypto کا ہیش ٹیگ اور 'ہم جیت گئے' کا متن تھا۔

دن 822: 1 فروری 2021 بجٹ کا دن تھا۔ حکومت نے 'دی کرپٹو کرنسی اینڈ ریگولیشن آف آفیشل ڈیجیٹل کرنسی بل 2021 کے نام سے ایک بل پیش کیا، جس میں مرکزی بینک کی ڈیجیٹل کرنسی متعارف کرانے کی کوشش کی گئی تھی اور ہندوستان میں تمام نجی کرپٹو کرنسیوں پر پابندی لگائی گئی تھی۔ کچھ استثناء کو چھوڑ کر کرپٹو کرنسی کی بنیادی ٹیکنالوجی اور اس کے استعمالات کا ذکر کیا گیا تھا۔ اس اعلان نے کرپٹو اسپیس میں کچھ خوف و ہراس پیدا کیا یہاں تک کہ حامیوں نے #IndiaWantsCrypto ہیش ٹیگ کو ٹرینڈ کیا۔

856 واں دن: 5 مارچ 2021 کو قانون سازوں کی جانب سے مثبت جواب ملنے کے ساتھ ہی شروع کی جانے والی اس مہم کو اپنی سب سے بڑی کامیابی حاصل ہوئی۔ سی این بی سی-ٹی وی 18 انڈیا بزنس لیڈر ایوارڈز میں وزیر خزانہ نرملا سیتارامن نے کہا کہ حکومت کریپٹو کرنسیوں کے بارے میں ایک بہت ہی "عمدہ پوزیشن" لے گی۔ دنیا ٹیکنالوجی کے ساتھ تیزی سے آگے بڑھ رہی ہے، ہم یہ ڈھونگ نہیں کر سکتے کہ ہم یہ نہیں چاہتے ہیں۔ ہم یہ یقینی بنانا چاہتے ہیں کہ کرپٹو دنیا میں ہر قسم کے تجربات کے لئے ایک ونڈو دستیاب ہے‘‘۔

یوم 995: آر بی آئی کے نائب گورنر ٹی ربی شنکر نے مرکزی بینک کے مرکزی بینک کے ڈیجیٹل کرنسی (سی بی ڈی سی) کو مرحلہ وار شروع کرنے کے منصوبوں کا اعلان کیا، جس سے ہول سیل اور خوردہ طبقات کا آغاز ہوگا۔ آر بی آئی کے اس اقدام سے ڈیجیٹل کرنسی کے فوائد کو تسلیم کیا گیا ہے لیکن ایک جائز جگہ کے مطابق "نجی کریپٹو کرنسیوں" کی کمی واقع ہوگی۔ بہر حال شیٹی نے ہمیشہ سی بی ڈی سی کے حق میں ٹویٹ کیا ہے، انھوں نے ٹویٹ کیا کہ اس فیصلے سے ہندوستان میں کریپٹو کرنسیوں کے بارے میں آگاہی اور افہام و تفہیم میں مدد ملے گی۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: Jul 30, 2021 12:13 PM IST