உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Modi@8:وزیراعظم مودی کے ویژن کو حقیقت میں بدلنے والی 8 ہستیاں

    وزیراعظم مودی کے 8 اہم ساتھی!

    وزیراعظم مودی کے 8 اہم ساتھی!

    Modi@8: مودی حکومت اب 8 سال مکمل کر رہی ہے۔ اس حکومت میں وہ 08 لوگ کون ہیں جنہوں نے وزیر اعظم مودی کے ساتھ خصوصی کردار ادا کیا اور اس حکومت کی کامیابی کی کہانی لکھنے میں تعاون کیا۔

    • Share this:
      Modi@8:یہ کریڈیٹ وزیر اعظم نریندر مودی کو جاتا ہے کہ جب سے انہوں نے 26 مئی 2014 کو بی جے پی اور این ڈی اے کی قیادت سنبھالی ہے، اس کی قسمت بدل کر رکھ دی ہے۔ مودی حکومت اب 8 سال مکمل کر رہی ہے۔ اس حکومت میں وہ 08 لوگ کون ہیں جنہوں نے وزیر اعظم مودی کے ساتھ خصوصی کردار ادا کیا اور اس حکومت کی کامیابی کی کہانی لکھنے میں تعاون کیا۔ آئیے ان لوگوں کے بارے میں جانتے ہیں۔

      امت شاہ
      سیاسی تجزیہ کاروں کا ماننا ہے کہ امت شاہ وزیر اعظم مودی حکومت میں نہ صرف نمبر دو ہیں بلکہ ان کا سایہ بھی ہے۔ مودی اور شاہ کا پرانا رشتہ ہے۔ دونوں کے درمیان بھی زبردست انڈرسٹینڈنگ ہے۔ شاہ نے نہ صرف بی جے پی کے صدر کے طور پر پوری پارٹی میں جان ڈالی بلکہ اسے ایک تنظیم کے طور پر بہت طاقتور بھی بنایا۔ پارٹی اب نئے اعتماد کے ساتھ ہر قسم کے انتخابات میں کامیابی کی نئی داستان لکھ رہی ہے۔

      اجیت ڈوبھال
      وہ مودی حکومت میں قومی سلامتی کے مشیر ہیں۔ ملک میں داخلی سلامتی سے لے کر مرکز کی کشمیر پالیسی میں وہ خصوصی کردار ادا کرتے رہے ہیں۔ اس کے ساتھ وہ چین سے لے کر جاپان میں ہونے والی کواڈ کانفرنس کے لیے وزیر اعظم کے ساتھ سرگرم ہیں۔ حکومت کے لیے وہ کبھی پس منظر میں رہتے ہیں اور کبھی سامنے سے اپنا کردار ادا کرتے ہیں۔

      پی کے مشرا
      وہ وزیراعظم کے پرنسپل سیکرٹری ہیں۔ مشرا گجرات کیڈر کے 1972 بیچ کے افسر ہیں۔ بنیادی طور پر اوڈیشہ سے تعلق رکھنے والے مشرا کو کم بولنے والے شخص کے طور پر جانا جاتا ہے لیکن ان کی معاشیات سے لے کر زراعت اور بجلی سے لے کر ڈیزاسٹر مینجمنٹ تک کے معاملات پر زبردست گرفت ہے۔

      نرملا سیتارمن
      نرملا سیتارمن کا پارٹی کی ترجمان سے اب ان کا شمار ایک قابل ایڈمنسٹریٹر وزیر کے طور پر کیا جاتا ہے۔ ان کے نام بہت سی کامیابیاں ہیں۔ حکومت میں ان کا قد بتدریج بڑھ رہا ہے۔ ایک خاتون وزیر خزانہ کی حیثیت سے انہوں نے ملک کو ترقی دی ہے۔

      نتین گڈکری
      نتین گڈکری مودی حکومت کے سینئر ترین وزیروں میں سے ایک ہیں، جن کے پاس اسکیموں کی کوئی کمی نہیں ہے۔ وہ وزیراعظم کے گتی شکتی نیشنل ماسٹر پلان میں کلیدی کردار ادا کرنے والے وزیر ہیں۔ ان کی سڑک ٹرانسپورٹ اور ہائی ویز کی وزارت کو ملک کا سب سے بہتر کام کرنے والا محکمہ سمجھا جاتا ہے۔

      ملک میں تیزی سے نئے ایکسپریس ویز اور سڑکوں کی تعمیر اور توسیع کا جال ان کے نام ہے۔

      ایس جئے شنکر
      جے شنکر، جو پوری زندگی ملک میں محکمہ خارجہ کے تحت اعلیٰ افسر رہے، ان کو 2019 میں وزیر خارجہ بنایا گیا تھا۔ وہ پہلے ایسے سابق سیکرٹری خارجہ ہیں جنہیں ملازمت سے براہ راست ریٹائر ہونے کے بعد کابینہ کا وزیر بنا کر وزارت خارجہ کا قلمدان سونپا گیا۔ بحیثیت سفارت کار ان کا کام اور قابلیت بے نظیر رہی۔وہ کئی معاملات میں بہت موثر رہے ہیں۔

      راجناتھ سنگھ
      راجناتھ سنگھ نے پہلے وزیر داخلہ اور پھر وزیر دفاع کے طور پر اپنا کردار بخوبی نبھایا ہے۔ ان کے دور میں فوج کی جدید کاری ایک نئی سطح پر پہنچی اور چین کے ساتھ کشیدگی کی صورت میں وہ ایک مضبوط وزیر کے طور پر سامنے آئے۔

      اپنی وزارتی ذمہ داریوں کو چھوڑ کر، وہ وزیر اعظم مودی کے قریبی معتمد سمجھے جاتے ہیں۔ انہیں سیاست کا بے پناہ تجربہ ہے اور وہ چھوٹی عمر سے ہی راشٹریہ سویم سیوک سنگھ سے وابستہ ہیں۔ سنگھ کو اکثر اسکول کے ایک پرانے لیڈر کے طور پر شمار کیا جاتا ہے-

      دھرمیندر پردھان
      دھرمیندر پردھان حکومت کی اعلیٰ قیادت کے قریب سمجھے جاتے ہیں۔ پردھان اپنی حکومت کے ذریعے حکومت کی بہت سی فلیگ شپ فلاحی اسکیمیں چلا رہے ہیں۔ خاص طور پر ان کی پردھان منتری اجولا یوجنا نے گاوؤں میں کھانا پکانے کا طریقہ بھی بدل دیا ہے۔ انہوں نے یہ بھی ظاہر کیا کہ مودی حکومت کس طرح غریبوں اور خواتین کے ساتھ ہے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Drone Festival Delhi:وزیراعظم مودی نے کہا-2030 تک ہندوستان بن جائے گا’ڈرون ہب‘

      یہ بھی پڑھیں:
      Modi@8:ہندوستان، ہرشہری کےلیے آفاقی،سستی صحت کی دیکھ بھال کے حصول کی راہ پرگامزن

      پیوش گوئل
      پروفیشنل چارٹرڈ اکاؤنٹنٹ پیوش گوئل بی جے پی کے رکن پارلیمنٹ بننے سے پہلے انویسٹمنٹ بینکر کے طور پر کام کرتے تھے۔ حکومت میں انہیں اہلیت کے لحاظ سے بہت اونچا سمجھا جاتا ہے۔ اسی لیے ان کے پاس حکومت میں کئی محکمے ہیں جن میں کوئلہ، بجلی، ریلوے اور خزانہ شامل ہیں۔ وہ راجیہ سبھا میں بھی لیڈر ہیں۔ پارٹی کے سابق خزانچی کی حیثیت سے وہ پارٹی کے لیے فنڈ ریزنگ کے معاملے میں زبردست صلاحیت رکھتے ہیں۔ انہوں نے اپنی وزارت کی ذمہ داریاں بخوبی نبھائی ہیں اور انہیں مودی حکومت کا زبردست محافظ سمجھا جاتا ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: