دنیا میں صرف 100 لوگوں کو ہے یہ عجیب بیماری ، رونے اور نہانے پر لگ جاتی ہے پابندی

ماہرین کے مطابق یہ بیماری کسی کو بھی ہوسکتی ہے ۔ اس کی ابھی تک کوئی علامت یا وجہ سامنے نہیں آسکی ہے ۔

Nov 28, 2019 08:41 PM IST | Updated on: Nov 28, 2019 08:41 PM IST
دنیا میں صرف 100 لوگوں کو ہے یہ عجیب بیماری ، رونے اور نہانے پر لگ جاتی ہے پابندی

علامتی تصویر

امریکہ کے کیلی فورنیا میں رہنے والی ایک 21 سال کی لڑکی دو ماہ میں ایک مرتبہ غسل کرتی ہے اور وہ بھی مجبوری میں ۔ ٹیسا ہینسین اسمتھ نام کی اس خوبصورت لڑکی کے رونے اور کھیلنے پر بھی پابندی ہے ۔ تاہم ایسا غسل کرنے کے ڈر یا کسی سماجی رسم رواج کی وجہ سے نہیں ہے ۔ ٹیسا کو پانی سے الرجی کی ایسی بیماری ہے ، جو دنیا میں بمشکل 100 لوگوں کو ہوگی ۔ اس عجیب و غریب اور کمیاب بیماری کا نام ایکواجینک یورٹیکاریا ہے ۔

ڈیلی میل میں شائع رپورٹ کے مطابق جب ٹیسا صرف نو سال کی تھی ، تب پہلی مرتبہ غسل کے بعد اس کے جسم میں دھبے پڑگئے ۔ ان دھبوں میں کھجلی کی پریشانی کے بعد ٹیسا کی ماں کو لگا کہ اس کو صابن یا شیمپو سے الرجی ہوگئی ہوگی ، لیکن ٹیسا کو تھوڑی دیر میں بخار آگیا ۔ پیشہ سے ڈاکٹر ٹیسا کی ماں کو اس وقت زیادہ تشویش لاحق ہوگئی جب یہ بار بار ہونے لگا ۔

Loading...

ٹیسٹ کروانے پر معلوم ہوا کہ ٹیسا ایک انتہائی کم پائی جانے والی بیماری میں مبتلا ہوگئی ہے ۔ اس بیماری میں انسان کو پانی سے الرجی ہوجاتی ہے ۔ یہ الرجی صرف پانی تک محدود نہیں رہتی ، اس میں انسان کو اپنے ہی پسینے ، آنسو اور تھوک تک سے پریشانی ہوسکتی ہے ۔

دنیا بھر میں یہ بیماری بمشکل 50 سے 100 لوگوں کو ہی ہوگی ۔

دنیا بھر میں یہ بیماری بمشکل 50 سے 100 لوگوں کو ہی ہوگی ۔ خواتین میں اس بیماری کے ہونے خطرہ زیادہ رہتا ہے اور بالخصوص جب وہ جوانی کی دہلیز پر ہوتی ہیں ۔ اس الرجی کے داغ جسم پر ابھرنے کے 30 سے 60 منٹ میں غائب ہوجاتے ہیں ، لیکن اس کے بعد تیز بخار متاثرہ کو اپنی زد میں لے لیتا ہے ۔

ماہرین کے مطابق یہ بیماری کسی کو بھی ہوسکتی ہے ۔ اس کی ابھی تک کوئی علامت یا وجہ سامنے نہیں آسکی ہے ۔ کم ہونے کی وجہ سے اس بابت زیادہ ریسرچ بھی نہیں کی گئی ہے ۔

اس بیماری میں مبتلا ٹیسا دن میں نو دوائیں کھاتی ہیں ۔ اس کا کہنا ہے کہ پہلے تو وہ دن میں 12 دوائیں کھایا کرتی تھی ۔ دوا کے ذریعہ وہ صرف الرجی سے ہونے والے نقصان کو کم کرسکتی ہے ۔ یہ بیماری پوری طرح سے ٹھیک نہیں ہوتی ہے ۔ ٹیسا اپنے غسل کے پانی میں سوڈیم بائیکاربونیٹ استعمال کرتی ہے ، تاکہ الرجی کا اثر کم ہوسکے ۔

Loading...