ہوم » نیوز » صحت

پہلی مرتبہ سیکس سے پہلے اور اس دوران خواتین کے دماغ و ذہن میں آتے ہیں یہ خیال: اسٹڈی

  • Share this:
پہلی مرتبہ سیکس سے پہلے اور اس دوران خواتین کے دماغ و ذہن میں آتے ہیں یہ خیال: اسٹڈی

پہلی مرتبہ سیکس کو لیکر جتنے سوال مردوں کے من میں ہوتے ہیں اتنے ہی سوال اور جھجھک خواتین کے من میں بھی ہوتی ہے۔ مردوں کے من پر جہاں اپنی پرفارمینس کو لیکر دباؤ رہتا ہے، وہیں خواتین کے من میں اپنے لکس کو لیکر ایک انجانی سی ان سکیورٹی حاوی رہتی ہے۔

پہلی مرتبہ سیکس سے پہلے خواتین کے من میں سوال بار۔بار اٹھتا ہے کہ کیا ان کا پارٹنر ان کے لکس کو پسند کرے گا؟ کیا وہ اپنے پارٹنر کا پورا ساتھ دے پائیں گی۔

شادی سے پہلے کاؤنسلنگ کیلئے پہنچنے والی لڑکیاں زیادہ تر اس بات کو لیکر پریشان رہتی ہیں کہ کیا وہ اپنے ہونے والے پارٹنر کی امیدوں پر کھری اتر پائیں گی۔ یہ کہنا ہے شہر کے کئی مشہور و معروف کاؤنسلرس کا۔

آرگزم کی فکر۔۔

خواتین کو سب سے زیادہ کلٹرس اسٹمیولیشن سے آرگزم ملتا ہے نہ کہ انٹر کورس سے۔ یہ بات گزشتہ دنوں ہوئی کئی اسٹڈی میں سامنے آئی ہے۔ ان اسٹڈیز کی مانیں تو دنیا بھر میں ایسی خواتین کی تعداد 70 فیصد کے قریب ہے۔ جنہوں نے انٹر کورس کی جگہ کلیٹرس اسٹمیولیشن سے آرگزم کو محسوس کیا ہے۔

صرف سیکس سے پہلے نہیں سیکس کے دوران بھی خواتین کے من میں اس طرح کے سوال اٹھتے رہتے ہیں کہ وہ ایکٹ کے دوران ٹھیک سے پرفارم نہیں کر پارہی ہیں۔ کیا ان کا پارٹنر ان سے مطمئن نہیں ہورہا ہے، کیا وہ اپنے کردار میں فٹ ہیں یا انہیں کچھ اور کریئٹویٹی کرنی ہوگی؟ ایسے سوال مسلسل ان کے دماغ اور ذہن میں رہتے ہیں۔
ایسا نہیں ہے کہ آرگزم کا مسئلہ صرف خواتین سے جڑا ہے۔ ایسا مردوں کے ساتھ بھی ہوتا ہے جب وہ طویل انٹر کورس کے بعد بھی کلائمیکس تک نہیں پہنچ پاتے ہیں۔ ایسی حالت کے بارے میں سوچنے سے ہی خواتین ایک عجیب سا ڈر محسوس کرتی ہیں۔
First published: Nov 29, 2019 07:21 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading