ہوم » نیوز » وطن نامہ

چین کو پاکستان نے دیا بڑا جھٹکا: فحش مواد پیش کرنے کے سبب ٹک ٹاک پر عائد کی پابندی

Pakistan blocks Chinese app TikTok: پاکستان (Pakistan) نے چینی ایپ ٹک ٹاک (TikTok) پر بھی پابندی عائد کردی ہے۔ پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی کا یہ بھی کہنا ہے کہ اس نے یہ فیصلہ ثقافت کیلے لیا ہے، سیکیورٹی کے لئے نہیں۔ اگر ٹک ٹاک اپنے مواد کو بہتر بنائے گا تو اتھارٹی اپنے فیصلے پر نظر ثانی کرے گی۔

  • Share this:
چین کو پاکستان نے دیا بڑا جھٹکا: فحش مواد پیش کرنے کے سبب ٹک ٹاک پر عائد کی پابندی
اگر ٹک ٹاک اپنے مواد کو بہتر بنائے گا تو اتھارٹی اپنے فیصلے پر نظر ثانی کرے گی۔

نئی دہلی. پاکستان  (Pakistan) نے چینی ایپ ٹک ٹاک  (TikTok) پر بھی پابندی عائد کردی ہے۔ پاکستان کی جیو نیوز کی رپورٹ کے مطابق ٹاک ٹاک کے ذریعے غیر قانونی آن لائن کنٹینٹ کو روکنے کے لئے  کوئی بھی اقدام نہ اٹھائے جانے کے سبب یہ کارروائی کی گئی ہے۔ ویڈیو شیئرنگ ایپ کو پاکستان میں فحاشی پھیلانے کی وجہ سے بلاک کردیا گیا ہے۔ تاہم  پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی کا یہ بھی کہنا ہے کہ اس نے یہ فیصلہ ثقافت کیلے لیا ہے، سیکیورٹی کے لئے نہیں۔ اگر ٹک ٹاک  اپنے مواد کو بہتر بنائے گا تو اتھارٹی اپنے فیصلے پر نظر ثانی کرے گی۔


ابھی کچھ دن پہلے ہی پاکستان کے وزیر اطلاعات شبلی فراز نے دا نیوز کو انٹرویو دیتے ہوئے دعوی کیا تھا کہ وزیر اعظم عمران خان (pakistan pm imran khan) بھی ٹک ٹاک پر پابندی  (TikTok Ban) عائد کرنا چاہتے ہیں لیکن انہوں نے واضح کیا کہ ڈیٹا سکیورٹی کی وجہ سے نہیں بلکہ دیگر وجوہات کی بنا پر اس پر پابندی عائد کی جاسکتی ہے۔ اس کے پیچھے ملک میں فحاشی پھیلانا ہے۔  ٹک ٹاک کے ساتھ اس طرح کی دیگر ایپ پر بھی پابندی عائد کرنے کا خیال کیا جارہا ہے۔


رپورٹ کے مطابق وزیر اعظم عمران خان (pakistan pm imran khan) نے پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی (پی ٹی اے) کو انٹرنیٹ ، سوشل میڈیا اور ایپس کو فحش کنٹینٹ سے آزاد کرنے کا حکم دیا ہے۔ پی ٹی اے  نے حال ہی میں پانچ ڈیٹنگ ایپس پر پابندی عائد کی تھی جن پر عریانی اور ہم جنس پرستی پھیلانے کا الزام عائد کیا گیا تھا۔ اسی دوران ، سرحدی تنازعہ  (India-China Border Tension) کے درمیان ، ہندوستان بھی  نے حال ہی میں ٹک ٹاک  سمیت 100 سے زیادہ چینی ایپس پر پابندی عائد کردی جس نے چین (china) بوکھلا گیا۔ ہندوستان نے ان ایپس کو ڈیٹا سکیورٹی ، ملک کی سلامتی اور خودمختاری کے لئے خطرناک قرار دیا تھا۔ اس کے بعد  امریکہ نے بھی ٹک ٹاک  (TikTok) پر پابندی عائد لگا دی  ہے۔

Published by: sana Naeem
First published: Oct 09, 2020 09:28 PM IST