ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

مشرقی لداخ سے افواج کو پیچھے ہٹانے کا پہلا مرحلہ تقریبا 15-20 دن میں ہوجائے گا مکمل: ذرائع

مشرقی لداخ (Eastern Ladakh) میں ہندستان اور چین کی فوج کے پیچھے ہٹنے کا پہلا مرحلہ (Disengagement) تقریبا 15-20 میں پورا کر لیا جائے گا۔

  • Share this:
مشرقی لداخ سے افواج کو پیچھے ہٹانے کا پہلا مرحلہ تقریبا 15-20 دن میں ہوجائے گا مکمل: ذرائع
مشرقی لداخ (Eastern Ladakh) میں ہندستان اور چین کی فوج کے پیچھے ہٹنے کا پہلا مرحلہ (Disengagement) تقریبا 15-20 میں پورا کر لیا جائے گا۔

مشرقی لداخ (Eastern Ladakh) میں ہندستان اور چین کی فوج کے پیچھے ہٹنے کا پہلا مرحلہ  (Disengagement)  تقریبا  15-20 میں پورا کر لیا جائے گا۔ حکومت کے عالمی ذرائع نے سی این این نیوز 18 کو بتایا ہے کہ ہندستان کی فوج اونچی حکمت عملی مقامات پر موجود ہے۔ وہاں سے انہیں سب سے آؒری میں ہتایا جائے گا۔ ذڑائع کے مطابق دونوں ممالک میں آپسی رضامندی بنی ہے۔ ہر اسٹیپ کے بعد دونوں فریقوں کی جانب سے ویریفکیشن کیا جائے گا۔ کیلاش رینج فوج تبھی ہٹائی جائیں گی جب ہمیں بھروسہ ہو جائے کہ حالات ویسے ہی چلتے رہیں گے جیسے ابھی پینگانگ لیکک کے علاقے میں ہیں۔


لداخ میں سرحدی کشیدگی کو کم کرنے کے معاملے میں اہم پیشرفت ہوئی ہے ۔ ہند۔چین نے لداخ کی پینگونگ سو جھیل کے شمالی اور جنوبی کناروں پر تعینات ہزاروں فوجیوں کو دونوں جانب ایک ساتھ پیچھے ہٹانے پر اتفاق کر لیا اور یہ عمل شروع بھی ہوگیا ہے ۔ وزیردفاع راجناتھ سنگھ نے راجیہ سبھا میں اس بات کی تصدیق کی۔ سنگھ نے کہا کہ پینگونگ سو جھیل سے دونوں افواج کی واپسی کا سمجھوتہ ہوا۔ انھوں نے چین سے سمجھوتوں پر عمل کرنے کی اپیل بھی کی۔ راجناتھ نے واضح کیا کہ ہندوستان ایک اِنچ بھی زمین کسی کو نہیں لینے دےگا کیونکہ ایل اے سی پر ہم مضبوط پوزیشن میں ہیں۔ سنگھ نے کہا کہ چین، فِنگر ایٹ کے مشرقی جانب شمالی کنارے پر اپنی افواج تعینات کرے گا۔ دونوں جانب کے فرنٹ لائن فوجیوں کو مرحلہ وار، مربوط طریقے اور توثیق کرتے ہوئے ہٹایا جارہاہے۔



دونوں فریق کی جانب سے اس علاقے میں تقریبا 100 ٹینک لگائے گئے تھے۔
ساؤتھ بینک کے پاس سے ٹینک اور مسلح گاڑیوں کو ہٹانے کا کام جمعرات کی شام تک مکمل کر لیا گیا۔ دونوں فریق کی جانب سے اس علاقے میں تقریبا 100 ٹینک لگائے گئے تھے۔ ذرائع کے مطابق لیک علاقے سے فوج پیچھے ہٹنے کے بعد 48 گھنٹے کے اندر 10 ویں کاپرس کے کمانڈر میٹنگ کریں گے۔ اسی میٹنگ میں تنازعہ کے دیگر علاقوں جیسے ڈیسپانگ، گوگرا ہاٹ صپرنگ اور ڈیم چاک پر چرچا کی جائے گی۔ 

مثبت قدم
ایک ذرائع نے بتایا کہ یہ ایک مثبت قدم ہے۔ چینی فریق نارتھ بینک میں فنگر 8 کے پیچھے جانے کو تیار ہیں۔ اب یہاں سے ہم مان سکتے ہیں کہ یہ عمل ہمارت پلان کے حساب سے ہوگا۔ ساؤتھ بینک سے چینی فریق نے اپنے ٹینک تیزی کے ساتھ ہٹائے ہیں لیکن ہمیں ابھی دیکھنا ہوگا کہ آگے کیا ہوتا ہے۔


وہیں پنگانگ سے ہندوستانی اور چینی فوج کے پیچھے ہٹنے سے متعلق وزیردفاع راجناتھ سنگھ نے آج راجیہ سبھا میں تصدیق کی۔اس موقع پر راجناتھ سنگھ نے کہا کہ پنگانگ لیک سے دونوں افواج کی واپسی کا سمجھوتہ ہوا۔انھوں نے چین سے سمجھوتوں پر عمل کرنے کی اپیل بھی کی۔راجناتھ سنگھ نے واضح کیا کہ ہندوستان ایک اِنچ بھی زمین کسی کو نہیں لینے دے گا کیونکہ ایل اے سی پر ہم مضبوط پوزیشن میں ہیں۔

Published by: Sana Naeem
First published: Feb 11, 2021 08:01 PM IST