ہوم » نیوز » عالمی منظر

امریکہ نے لداخ میں حملے کے لئے چین کو ٹھہرایا ذمہ دار، کہا۔ کورونا پر دھیان بھٹکانے کی یہ کوشش

امریکہ نے کہا ہے کہ گلوان وادی میں جو کچھ بھی ہوا اس کے لئے پوری طرح سے چین ذمہ دار ہے۔

  • Share this:
امریکہ نے لداخ میں حملے کے لئے چین کو ٹھہرایا ذمہ دار، کہا۔ کورونا پر دھیان بھٹکانے کی یہ کوشش
امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی فائل فوٹو

واشنگٹن۔ لداخ کی گلوان وادی (Galwan Valley) میں پچھلے دنوں ہندستان کے 20 جوان شہید ہو گئے۔ ایسے میں ہندستان اور چین کے درمیان لائن آف ایکچول کنٹرول (LAC) پر ماحول گرم ہے۔ پورے معاملہ کو فی الحال بات چیت کے ذریعہ سلجھانے کی کوشش کی جا رہی ہے۔ حالانکہ ہماری فوج کو بھی الرٹ پر رکھا گیا ہے۔ اس بیچ امریکہ نے کہا ہے کہ گلوان وادی میں جو کچھ بھی ہوا اس کے لئے پوری طرح سے چین ذمہ دار ہے۔ امریکہ نے ساتھ ہی کہا ہے کہ ایسی حرکت کر چین کورونا وائرس سے لوگوں کا دھیان بھٹکانے کی کوشش کر رہا ہے۔


چین کی ہے غلطی


بتا دیں کہ امریکہ کے وزیر خارجہ مائک پومپیو جمعہ کے روز چین میں تھے۔ وہاں انہوں نے چین کے ایک بڑے سفارت کار یانگ ریچی سے ملاقات کی۔ اس ملاقات کے بعد امریکی آفیسر ڈیوڈ سٹلون نے بیان جاری کرتے ہوئے کہا’ ہندستان۔ چین سرحد پر اس طرح کا تعطل پہلے بھی ہوا ہے جب سال 2015 میں چین کے صدر شی جن پنگ ہندستان کے دورے پر گئے تھے۔ چین کی فوج اس بار کافی اندر تک گھس آئی تھی۔ ان کی تعداد بھی زیادہ تھی۔ اس سے پہلے ہم نے ایسے ہی حالات ڈوکلام میں دیکھے تھے۔


لداخ میں ہندستانی فوجیوں کی شہادت کے بعد وزیر خارجہ پومپیو نے کہا تھا کہ ہم چین کے ساتھ حالیہ ٹکراو کے بعد ہندوستان کے شہیدوں کے تئیں ہم اپنے گہرے رنج وغم کا اظہار کرتے ہیں۔ ہم فوجیوں کے کنبوں اور ان کے چہیتوں کو یاد رکھیں گے، کیونکہ وہ دکھی ہیں۔

بتا دیں کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ بھی چین کو لے کر مسلسل اظہار ناراضگی کرتے رہے ہیں۔ انہوں نے جمعرات کو ایک ٹویٹ میں اس بات کا اشارہ دیا ہے کہ امریکہ چین کے ساتھ ہر طرح کے کاروباری تے ختم کرنا چاہتا ہے۔ انہوں نے جمعرات کو کہا کہ امریکہ کے پاس چین سے پوری طرح سے الگ ہونے کا متبادل ہے۔
First published: Jun 20, 2020 09:34 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading