உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Hajj 2022: مناسک حج کاآج سےہوگاآغاز، 10 لاکھ سےزائدعازمین حج کوسفرحج کی سعادت حاصل

    مرکزی حج کمیٹی نے مکہ اور مدینہ میں ہندوستانی عازمین کے لیے تمام حفاظتی تدابیر اختیار کی ہیں۔

    مرکزی حج کمیٹی نے مکہ اور مدینہ میں ہندوستانی عازمین کے لیے تمام حفاظتی تدابیر اختیار کی ہیں۔

    سعودی عرب میں زیادہ تر بند جگہوں پر اب ماسک لازمی نہیں ہیں لیکن یہ اسلام کے مقدس ترین مقام مسجد الحرام میں لازمی ہوگا۔ بیرون ملک سے آنے والے عازمین کو پی سی آر ٹیسٹ کا نتیجہ منفی جمع کرانا ہوگا۔

    • Share this:
      سعودی عرب: بیرون ملک سے آنے والے 850,000 سمیت 10 لاکھ عازمین آج سے باضابطہ طور پر مناسک حج ادا کریں گے۔ عالمی وبا کورونا وائرس کے بعد یہ پہلی بار ہے کہ اقطاع عالم سے حجاج کرام مکہ مکرمہ میں جمع ہوئے ہیں۔ حجاج کی سہولیات کے لیے وسیع تر انتظامات بھی کئے گئے ہیں۔

      سعودی عرب کے مقدس شہر مکہ مکرمہ میں جمعہ کو حج کی ادائیگی کے لیے ہزاروں عازمین کی آمد شروع ہوچکی ہے۔ بہت سے پہلے آنے عازمین طواف کعبہ اور دیگر عبادات میں مصروف ہیں۔ مصری حاجی محمد لطفی نے اے ایف پی کو بتایا کہ جب میں نے پہلی بار کعبہ کو دیکھا تو مجھے کچھ عجیب سا لگا اور میں رونے لگا۔

      سیکورٹی فورسز نے اتوار کو مکہ میں ایک پریڈ گراؤنڈ مارچ کیا، جب کہ پولیس فورسز نے تعاقب اور گرفتاری کی صورت حال کا ایک فرضی مظاہرہ کیا اور پیرامیڈیکس نے حفاظت کے لیے ایئر لفٹنگ کے لیے فوری ردعمل کے اوقات کی نقل کی۔

      حج اسلام کے پانچ ستونوں میں سے ایک ہے، جس کو تمام استطاعت رکھنے والے مسلمانوں پر کم از کم ایک بار کرنا ضروری ہے۔ سال 2019 میں تقریباً 2.5 ملین افراد نے فرائض حج میں حصہ لیا، جن میں میدان عرفات میں جمع ہونا اور منیٰ میں شیطان کنکرے مارنا بھی شامل ہے۔

      پچھے سال جب کورونا وبائی مرض نے زور پکڑ لیا، غیر ملکیوں کو روک دیا گیا اور حج کو عالمی سپر اسپریڈر میں تبدیل ہونے سے روکنے کے لیے نمازیوں کو صرف 10,000 تک محدود کر دیا گیا۔

      مسجد الحرام میں 4,000 سے زیادہ کارکنان کی خدمات:

      حج کا خرچہ کم از کم 5,000 ڈالر فی شخص ہے۔ عالمی سطح پر کورونا وبا کے نافذ ہونے سے پہلے سرکاری اعداد و شمار سے پتہ چلتا ہے کہ مملکت سعودی عرو نے 2.6 ملین عازمین حج سے سالانہ تقریباً 12 بلین ڈالر کمائے جو حج کے لیے مکہ اور مدینہ جاتے تھے اور عمرہ کے لیے تقریباً 19 ملین زائرین شامل ہیں۔ عمرہ حج کی دوسری شکل ہے جو سال کے کسی بھی وقت کیا جاسکتا ہے۔

      یہ بھی پڑھئے: سفر حج پر 300 عازمین نے کیا ایسا کام، ہوگئے گرفتار، دو لاکھ کا لگا جرمانہ

      سعودی عرب اب خواتین کو مرد رشتہ داروں کے بغیر حج میں شرکت کی اجازت دیتا ہے، یہ شرط گزشتہ سال ختم کر دی گئی تھی۔

      مزید پڑھیں: Pakistan News: پاکستان کے وزیردفاع کا بڑا بیان، عمران خان نے امریکہ سے مانگی معافی، ہمارے پاس اس کے پختہ ثبوت



      سعودی عرب میں زیادہ تر بند جگہوں پر اب ماسک لازمی نہیں ہیں لیکن یہ اسلام کے مقدس ترین مقام مسجد الحرام میں لازمی ہوگا۔ بیرون ملک سے آنے والے عازمین کو پی سی آر ٹیسٹ کا نتیجہ منفی جمع کرانا ہوگا۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: