உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بنگلہ دیش : رمضان سے قبل خیرات کی رقم کی تقسیم کے دوران بھگدڑ ، 10 خواتین کی موت ، 50 دیگر زخمی

    بنگلہ دیش پولیس کی فائل فوٹو

    بنگلہ دیش پولیس کی فائل فوٹو

    جنوبی بنگلہ دیش کے چٹاگونگ شہر میں ایک تاجر کے گھر پر خیرات کی رقم لینے کے لئے ہزار و ں افراد کی بھیڑ جمع ہونے کے دوران آج بھگدڑ مچنے سے کم سے کم 10 خواتین موت ہوگئی اور 50 افراد زخمی ہوگئے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:
      چٹاگونگ (بنگلہ دیش): جنوبی بنگلہ دیش کے چٹاگونگ شہر میں ایک تاجر کے گھر پر خیرات کی رقم لینے کے لئے ہزار و ں افراد کی بھیڑ جمع ہونے کے دوران آج بھگدڑ مچنے سے کم سے کم 10 خواتین موت ہوگئی اور 50 افراد زخمی ہوگئے۔ بنگلہ دیش پولس نے بتایا کہ رمضان سے قبل تقسیم کی جانے والی خیرات کی رقم لینے کے دوران بھگدڑ ہونے سے 10 عورتوں کی موت ہوئی ہے۔ بھیڑ میں تقریبا دس سے بارہ ہزار افراد موجود تھے، جن میں بیشتر خواتین تھیں۔
      بنگلہ دیش میں رمضان سے قبل ضرورتمندوں کو خیرات کے طورپر رقوم یا ضروری سامان تقسیم کرنے کی روایت ہے۔ پولس آفیسر رفیق الاسلام نے بتایا کہ اسٹیل مل کے مالک کے گھر کے باہرہزاروں کی تعداد میں لوگ کپڑے اور دیکر سامان لینے کے لئے جمع ہوئے تھے، اسی دوران ایک دوسرے کو دھکیلنے سے بھگدڑ شروع ہوگئی، جس میں کئی ہلاکتیں ہوئی ہيں۔
      یہ واقعہ راجدھانی ڈھاکہ سے 260 کلومیٹر دور ضلع چٹاگونگ میں پیش آیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ بھگدڑ میں زخمیوں کو نزدیکی اسپتالوں میں علاج کے بعد گھر بھیج دیا گیا ہے۔
      First published: