ہوم » نیوز » عالمی منظر

اسرائیلی فوج کی اندھادھند فائرنگ میں 13سالہ فلسطینی بچہ کی موت

میسرہ ابو شلوف غزہ پٹی کے شمالی علاقہ جبالیہ میں فائرنگ کا نشانہ بنا، اس کے علاوہ 15 دیگر فلسطینی بھی زخمی ہوگئے۔

  • UNI
  • Last Updated: Apr 13, 2019 11:27 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
اسرائیلی فوج کی اندھادھند فائرنگ میں 13سالہ فلسطینی بچہ کی موت
فائل فوٹو، رائٹرز۔

غزہ کی پٹی پر اسرائیلی فوج کی فلسطینی مظاہرین پر اندھادھند فائرنگ کے نتیجے میں ایک بچہ شہید ہوگیا۔ ’عرب ٹی وی ‘کے مطابق اسرائیلی فورسز نے فائرنگ اس وقت کی جب ہزاروں فلسطینی غزہ پٹی سے متصل سرحدی باڑ کے قریب احتجاجی مظاہرہ کر رہے تھے۔

اس موقع پر قابض فورسز نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئے آنسو گیس کی شدید شیلنگ اور فائرنگ کی جس سے 15 سالہ بچہ میسرہ ابو شلوف کی موت ہوگئی ۔


میسرہ ابو شلوف غزہ پٹی کے شمالی علاقہ جبالیہ میں فائرنگ کا نشانہ بنا، اس کے علاوہ 15 دیگر فلسطینی بھی زخمی ہوگئے۔


خیال رہے کہ غزہ میں 30 مارچ2018 سے شروع ہونے والی احتجاجی مہم کے دوران اب تک 272 فلسطینی ہلاک ہوئے ہیں۔ اسی عرصہ میں گیس شیلز اور گولیاں لگنے سے 16 ہزار 656 فلسطینی شدید زخمی ہوئے، جبکہ مجموعی طور پر 30 ہزار سے زائد فلسطینی زخمی ہوئے ہیں۔

First published: Apr 13, 2019 11:27 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading