உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    عجیب و غریب حالت میں 1500 سال پرانی قبر میں ملے مرد۔خاتون کے کنکال، کبھی نہ مرنے والے پیار کی کہانی کو کر رہے ہیں بیان

     رپورٹ کے مطابق مردوں اور عورتوں کا ایک ساتھ دفن ہونا عام بات نہیں وہ بھی گلے لگنے کی حالت میں۔ چین میں یہ پہلی بار دیکھا گیا ہے  جس نے اس وقت کے معاشرے میں محبت کی سوچ کو ظاہر کیا ہے

    رپورٹ کے مطابق مردوں اور عورتوں کا ایک ساتھ دفن ہونا عام بات نہیں وہ بھی گلے لگنے کی حالت میں۔ چین میں یہ پہلی بار دیکھا گیا ہے جس نے اس وقت کے معاشرے میں محبت کی سوچ کو ظاہر کیا ہے

    رپورٹ کے مطابق مردوں اور عورتوں کا ایک ساتھ دفن ہونا عام بات نہیں وہ بھی گلے لگنے کی حالت میں۔ چین میں یہ پہلی بار دیکھا گیا ہے جس نے اس وقت کے معاشرے میں محبت کی سوچ کو ظاہر کیا ہے

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      یہ دنیا ہزاروں ۔ لاکھوں عجیب و غریب چیزوں سے بھری پڑی ہے ، جو وقتا فوقتا انسانوں کو حیران کرتی ہے اور ہمیں اس بات کا احساس دلاتی ہے کہ ہم اس دنیا کے بارے میں ابھی کتنا کم جانتے ہیں۔ حال ہی میں ایک چینی ماہر آثار قدیمہ نے ایسی عجیب و غریب چیز ڈھونڈ نکالی ہے  جو سائنسدانوں کے لیے بھی بڑی حیرت کی بات ہے۔ چین میں ماہرین آثار قدیمہ (Archaeologists)  کو مرد اور خاتن کے دو کنکال ملے ہیں جنہیں ایک دوسرے سے گلے لگے  (Embracing Position)  میں دفن کیا گیا ہے۔ یہ کنکال کبھی نہ مرنے والی محبت  (Eternal Love) کی کہانی بیان کر رہے ہیں۔

      1500 year old skeleton
      (फोटो: Twitter/@tac_org)


      ماہرین کا ماننا ہے کہ یہ کنکال 1500 سال (1500 years old skeleton)  پرانے ہیں جسے سال 2020 میں شمالی چین (Northern China) میں کھوجا گیا تھا۔ چین کے صوبے شانگجی میں تعمیراتی کام جاری تھا جب یہ دو کنکال ایک قبرستان کی کھدائی کے دوران نکلے۔  ان دو کنکالوں کا معائنہ کرتے ہوئے  سائنسدانوں نے پایا کہ مرد کا کنکال تقریبا 5 فٹ 4 انچ ہے اور اس کی موت 29 سے 35 سال کے درمیان ہوئی ہوگی ۔ مرد کنکال کے ہاتھ کی ہڈی ٹوٹی ہوئی تھی، دائیں ہاتھ کی ایک انگلی غائب تھی اور دائیں ٹانگ کی ہڈی بھی ٹوٹی ہوئی تھی۔

      1500 year old skeleton
      Twitter/@Rodger_Laz


      دوسری طرف  خاتون کے کنکال کا معائنہ کرنے کے بعد سائنسدانوں نے اندازہ لگایا کہ مرد کی موت کے بعد  اس نے بھی اپنی زندگی چھوڑ کر اس کے ساتھ ہی دفن ہونے کا فیصلہ کیا ہوگا۔ خاتون کی عمر 35 سے 40 سال کے درمیان ہے جبکہ اس کا قد 5 فٹ 2 انچ ہے۔ اس سال جون میں  اس کنکال سے متعلق تفصیلات بین الاقوامی جرنل آف اوسٹیو آرکیالوجی (International Journal of Osteoarchaeology)  کی ایک رپورٹ میں دی گئی ہیں۔

      سائنسدانوں نے اس رپورٹ میں بتایا کہ امر پریم کیایسی مثال آثار قدیمہ میں کم ہی دیکھنے کو ملتی ہے۔ کنکال دیکھ کر رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ اس معاملے میں موت کے بعد دوسری دنیا میں بھی اپنی محبت کو برقرار رکھنے کے لیے  شوہر۔بیوی نے ایک ساتھ دفن کرنے کا فیصلہ لیا جس سے وہ اگلے جنم  میں بھی ساتھ رہیں۔

      محققین نے لکھا کہ شوہر اور بیوی کو گلے لگانے (Husband-Wife Embrace)  کی حالت میں دفن کیا گیا تاکہ دونوں دوسری دنیا میں ساتھ رہ سکیں۔ رپورٹ کے مطابق مردوں اور عورتوں کا ایک ساتھ دفن ہونا عام بات نہیں وہ بھی گلے لگنے کی حالت میں۔ چین میں یہ پہلی بار دیکھا گیا ہے  جس نے اس وقت کے معاشرے میں محبت کی سوچ کو ظاہر کیا ہے۔ سائنسدانوں نے کہا کہ 386 سے 534 کے دوران شمالی وی ڈائنیسٹی کے دوران ان کنکالوں کو دفنایا گیا ہوگا۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: