உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    فیفا 2018 : جیت کے ساتھ ختم ہوا سعودی عرب کا سفر ، مصر کو 2-1 سے ہرایا

    سعودی عرب کی ٹیم ۔

    سعودی عرب کی ٹیم ۔

    فیفا عالمی کپ فٹ بال کے ناک آؤٹ کی دوڑ سے باہر ہوچکے سعودی عرب نے مصرکے خلاف پیر کے روز گروپ اے میں وقار کی جنگ جیت لی اور وہ عالمی کپ سے جیت کے ساتھ رخصت ہوا

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:
      وولگو گراد: فیفا عالمی کپ فٹ بال کے ناک آؤٹ کی دوڑ سے باہر ہوچکے سعودی عرب نے مصرکے خلاف پیر کے روز گروپ اے میں وقار کی جنگ جیت لی اور وہ عالمی کپ سے جیت کے ساتھ رخصت ہوا۔ 24 برسوں میں سعودی عرب کی عالمی کپ میں یہ پہلی جیت ہے۔سعودی عرب اس مقابلے کو جیتنے کے ساتھ گروپ میں آخری مقام پر پہنچنے کی شرمندگی سے بچ گیا ۔ اس کا تیسرامقام رہا جبکہ مصر کو گروپ میں چوتھا مقام ملا۔ سعودی عرب نے روس کے ہاتھوں 0۔5 سے اور یوراگوے سے 0۔1 سے ملی شکست کے بعد واپسی کرتےہوئے بالآخر جیت کا ذائقہ چکھ ہی لیا۔
      محمد صالح نے 22 ویں منٹ کے گول سے مصر کو برتری دلائی ، لیکن سلمان الفاریز نے پہلے ہاف کے انجری ٹائم کے چھٹے منٹ میں پنالٹی پر گول کرکے سعودی عرب کو برابری دلادی۔ میچ مقررہ 90 منٹ کے بعد 1۔1 کی برابری پر تھا ، لیکن انجری ٹائم کے پانچویں منٹ میں سلیم الداسری نے ایشیائی ٹیم کے لئے میچ فاتح گول داغ کر سعودی عرب کے مداحوں کو خوشی کا موقع فراہم کیا۔
      مصر کو اس سے قبل یوراگوے سے 0۔1 سے اور پھر روس سے 1۔3 سے شکست ملی تھی۔ 1990 کے بعد سے پہلا عالمی کپ کھیل رہے مصر کے لئے ٹورنامنٹ مایوس کن رہا اور اس نے اپنے تینوں میچ گنوا دیئے۔ مصر نے 45 سالہ گول کیپر ایصام الہادری کو اس مقابلے میں اتارا اور اس کے ساتھ ہی وہ عالمی کپ میں کھیلنے والے سب سے عمرداز کھلاڑی بن گئے۔ انہیں گزشتہ دو میچوں میں اتارا نہیں گیا تھا۔
      First published: