ترکی اور فلسطین کے صدورعید الاضحی کے موقع پر روس کے مہمان ہوں گے

ماسکو : عید الاضحی کے موقع پر یہاں کی نوتعمیرشدہ سب سے بڑی یورپی جامع مسجد کے افتتاح میں صدر ترکی رجب طیب اردوگان بحیثیت مہمان موجود رہ سکتے ہیں

Sep 20, 2015 02:14 PM IST | Updated on: Sep 20, 2015 02:14 PM IST
ترکی اور فلسطین کے صدورعید الاضحی کے موقع پر روس کے مہمان ہوں گے

ماسکو : عید الاضحی کے موقع پر یہاں کی نوتعمیرشدہ سب سے بڑی یورپی جامع مسجد کے افتتاح میں صدر ترکی رجب طیب اردوگان بحیثیت مہمان موجود رہ سکتے ہیں۔ وہ 23 ستمبر کو روس کا دورہ کریں گے۔ ترکی کی صدارتی انتظامیہ کے ذرائع کے حوالے سے یہاں یہ اطلاع دی گئی ہے۔

صدر روس کے ترجمان دمیتری پیسکوو نے بتایا کہ جامع مسجد کی افتتاحی تقریب میں فلسطین کے سربراہ محمود عباس بھی موجود ہوں گے۔ ماسکو میں قیام کے دوران صدر ترکی روس کے رہنما ولادی میر پوتین کے ساتھ مذاکرات کریں گے۔

آن لائن روسی ذرائع ابلاغ کے مطانق یورپ کی اس سب سے بڑی جامع مسجد ماسکو کی تعمیرنو پر دس برسوں کے دوران تقریبا" سترہ کروڑ روبل خرچ کیے گئے ہیں۔ عید الاضحی سے ایک روز پہلے 23 ستمبر کو اس نوتعمیر جامع مسجد کے افتتاح کی تقریب میں میں کئی ملکوں کے سربراہ شریک ہونگے۔

جامع مسجد کی نئی عمارت چھ منزلہ ہے اور اس کے رقبے کو بیس گنا زیادہ کرکے 19000 مربع میٹر کیا گیا ہے ۔اب مسجد میں بیک وقت پانچسو نہیں بلکہ دس ہزار نمازی نماز ادا کر سکتے ہیں۔

Loading...

روس کے مفتیوں کی کونسل کے نائب سربراہ روشن عبیاسوو کے مطابق اس تعمیر میں عام مسلمانوں اور تاجروں کی عطیات شامل ہیں۔ آن لائن روسی ذرائع ابلاغ نے ماسکو اور روسی فیڈریشن کے مرکزی خطے کے مفتی البیر کراگانوو کے حوالے سے مزید خبر دی ہے کہ روس میں ایک معتبر مرکز کا قیام ضروری ہے جہاں ماہرین قرآن کا یکساں اور درست ترجمہ کر سکیں۔

مفتی البیر کراگانووکے مطابق ایسا مرکز کسی اعلٰی اسلامی تعلیمی ادارے کے ساتھ منسلک ہونا چاہیے۔ ماسکو کے مفتی نے مزید کہا کہ اس وقت روس میں ایسے ماہرین کی کمی ہے جو قرآن کے مسودے کے درست ترجمے سے متعلق تنازعات کو حل کر سکیں۔ تجویز ہے کہ مسلمان دینی قیادت کو چاہیے کہ ایسا لٹریچر سامنے لائیں جس کی انہوں نے پڑتال کی ہو اور جو کسی خطرے کا سبب نہ بنے۔

Loading...
Listen to the latest songs, only on JioSaavn.com