افغانستان کے شمالی صوبے تاخر میں ایک فضائی حملے میں 30جنگجو ہلاک

اس ماہ کے شروعات سے ہی تاخر صوبے میں سلامتی دستوں اور جنگجوؤں کے درمیان لڑائی جاری ہے۔طالبانی جنگجوؤں نے پڑوسی یانگی کالا اور درکاد اضلاع میں سلامتی دستوں کے ساتھ لڑائی کے بعد ان اضلاع پر قبضہ کرلیا ہے۔

Sep 12, 2019 02:22 PM IST | Updated on: Sep 12, 2019 02:22 PM IST
افغانستان کے شمالی صوبے تاخر میں ایک فضائی حملے میں 30جنگجو ہلاک

فائل فوٹو

افغانستان کے شمالی صوبے تاخر میں ایک فضائی حملے میں 30جنگجو مارےگئے ۔

افغان فوج کی کور 217پامر کے عبد الخلیل خلیلی نے بتایا کہ خواجہ بہاؤالدین ضلع کے بیرونی علاقے میں جنگجوؤں کے چھپے ہونے کی خفیہ اطلاع کی بنیاد پر یہ فضائی حملہ کیاگیا۔ حملے میں تقریباً30جنگجو مارےگئے اور اتنی ہی تعداد میں زخمی بھی ہوئے ۔

انہوں نے بتایا کہ خفیہ اطلاع ملی تھی کہ چھوٹے ہتھیاروں اور راکٹ پروپیلڈ گرینیڈ سے لیس کچھ جنگجو ضلع کے مرکز میں بڑا دہشت گردانہ حملہ کرنے کا منصوبہ بنا رہے ہیں۔اس اطلاع کی بنیاد پر جنگجوؤں کے خلاف کارروائی کی گئی۔

خلیل نے بتایا کہ کارروائی میں فوج کی تین گاڑیوں کو بھی تباہ کردیاگیا جنہیں جنگجوؤں نے چوری کرلیاتھا۔حالانکہ انہوں نےیہ اطلاع نہیں دی کہ یہ فضائی حملہ افغان فضائیہ نے کیا ہے یا ناٹو کی قیادت والی اتحادی فوج نے۔

Loading...

واضح رہے کہ اس ماہ کے شروعات سے ہی تاخر صوبے میں سلامتی دستوں اور جنگجوؤں کے درمیان لڑائی جاری ہے۔طالبانی جنگجوؤں نے پڑوسی یانگی کالا اور درکاد اضلاع میں سلامتی دستوں کے ساتھ لڑائی کے بعد ان اضلاع پر قبضہ کرلیا ہے۔

Loading...