ہوم » نیوز » عالمی منظر

سشما سوراج کا جہاز اے ٹی سی سے منقطع رہا 14منٹ، افسران میں زبردست بے چینی

وزارت خارجہ سشما سوراج ان دنوں ماریشس اور جنوبی افریقہ کے دورہ پر ہیں۔ ہفتہ کو ماریشس جانے کے دوران ان کے پلین سے ایئر ٹریفک کنٹرول (اے ٹی سی) کا کنکشن تقریباً 14 منٹ تک منقطع رہا۔

  • Share this:
سشما سوراج کا جہاز اے ٹی سی سے منقطع رہا 14منٹ، افسران میں زبردست بے چینی
وزارت خارجہ سشما سوراج ان دنوں ماریشس اور جنوبی افریقہ کے دورہ پر ہیں۔ ہفتہ کو ماریشس جانے کے دوران ان کے پلین سے ایئر ٹریفک کنٹرول (اے ٹی سی) کا کنکشن تقریباً 14 منٹ تک منقطع رہا۔

وزارت خارجہ سشما سوراج ان دنوں ماریشس اور جنوبی افریقہ کے دورہ پر ہیں۔ ہفتہ کو ماریشس جانے کے دوران ان کے پلین سے ایئر ٹریفک کنٹرول (اے ٹی سی) کا کنکشن تقریباً 14 منٹ تک منقطع رہا۔ اس دوران ماریشس نے پلین سے رابطہ نہیں ہوپانے کا الرٹ بھی جاری کردیا تھا۔ حالانکہ اے ٹی ایس افسران کے مطابق کچھ دیر بعد ہی سشما سوراج کے پلین سے دوبارہ رابطہ ہوگیا۔


ایئر پورٹ اتھارٹی کے مطابق سمندر کے اوپر اگر 30 منٹ تک کوئی کمیونی کیشن  (بات چیت) نہیں ہوتی ہے، تو ایسا الرٹ جاری کیا جاتا ہے۔ کیونکہ یہ وی وی آئی پی فلائٹ تھی، اس لئے 14 منٹ میں ہی الرٹ جاری کردیا گیا۔ ایسا اس لئے ہوا کیونکہ پائلٹ نے ماریشس کے ہوائی علاقوں میں ہونے کے باوجود ماریشس کی اے ٹی سی سے رابطہ نہیں کیا تھا۔


سشما سوراج انڈین ایئر فورس کے پلین آئی ایف سی 31 میں سوار تھیں۔ بعد میں ان کا پلین محفوظ ماریشس پہنچا۔ وہیں دوسری طرف وزارت خارجہ نے اس موضوع پر کوئی اطلاع ہونے سے انکار کردیا ہے۔


 

ایئر پورٹ اتھارٹی آف انڈیانے ایک پریس ریلیز جاری کرکے اس کی اطلاع دی ہے۔ ایئر پورٹ اتھارٹی کے مطابق سشما سوراج کے پلین نے ترویندرم سے ہفتہ کی شام 4 بجے ٹیک آف کیا تھا۔ ایئرپورٹ اتھارٹی انڈیا نے بتایا کہ لوکل اے ٹی سی نے اسے چنئی ایف آئی آر (فلائٹ انفارمیشن ریزن) کو پاس کردیا۔ پھر چنئی نے ماریشس ایف آئی آر کو اس کی اطلاع دے دی تھی۔  





واضح رہے کہ پرواز کے دوران ایک پلین کئی ایف آئی آر میں رہتا ہے، جس سے وہ اس پرواز علاقہ کے رابطہ میں رہتا ہے۔ ایک بار جب الارم کی آواز آئی، سبھی لوگ اس پلین کو لے کر محتاط ہوگئے، جس کے لئے وہ الارم بجایا گیا تھا۔ ہندوستان اے ٹی ایس نے بھی وی ایچ ایف کے ذریعہ پلین سے رابطہ کرنے کی کوشش کی۔

وی وی آئی پی فلائٹ ہونے کی وجہ سے ماریشس نے آئی این سی ای آر ایف اے الارم کا اعلان کیا، جس کا مطلب ہوتا ہے غیر یقینی۔ اس کے بعد انہوں نے چنئی ایئر ٹریفک کنٹرول سے رابطہ کیا۔ وزارت خارجہ کے پرواز کے لئے شام تقریباً 4.44 پر الارم بجایا گیا اور 4.58 پراس کے پائلٹ سے رابطہ ہوسکا، جس کے بعد سبھی افسران نے راحت کی سانس لی۔

 
First published: Jun 03, 2018 07:03 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading