القاعدہ کا خونخوارمبینہ دہشت گرد عاصم عمرسمیت 7ہلاک، ہندوستان کےلئےتھا بڑا خطرہ

عاصم عمرپاکستانی شہری تھا۔ اس کے ساتھ القاعدہ ہندوستانی برصغیرکے 6 دہشت گردوں کو ہلاک کردیا گیا۔ افغان نیشنل ڈائریکٹوریٹ نے ٹوئٹ کرکے اس آپریشن کی تصدیق کی ہے۔

Oct 08, 2019 08:53 PM IST | Updated on: Oct 08, 2019 08:53 PM IST
القاعدہ کا خونخوارمبینہ دہشت گرد عاصم عمرسمیت 7ہلاک، ہندوستان کےلئےتھا بڑا خطرہ

القاعدہ کا مبینہ دہشت گرد عاصم عمرہلاک۔

افغانستان میں سیکورٹی اہلکاروں کو بڑی کامیابی ملی ہے۔ افغانستان اورامریکی فوج کے ایک مشترکہ آپریشن میں عاصم عمرنام کا مبینہ دہشت گرد ہلاک کردیا گیا۔ نیوز ایجنسی اے ایف پی کےمطابق عاصم عمرپاکستانی شہری تھا۔ اس کے ساتھ القاعدہ ہ کے برصغیریونٹ کے 6 دہشت گردوں کوہلاک کردیا گیا۔ افغان نیشنل ڈائریکٹوریٹ نےٹوئٹ کرکےاس آپریشن کی تصدیق کی ہے۔

افغان نیشنل ڈائریکٹوریٹ کی طرف سےکہا گیا ہےکہ امریکہ اورافغانستان کی فوج کے مشترکہ آپریشن میں عاصم عمرکو23-22 ستمبرکوہلاک کیا گیا تھا، لیکن اس کی تصدیق منگل کےروزیعنی 8 اکتوبرکوکی گئی۔ 2014 میں عاصم عمرکوہندوستانی برصغیرکےلئے القاعدہ کا چیف بنایا گیا تھا۔ عاصم عمرہندوستانی برصغیرمیں دہشت گردانہ سرگرمیوں کو انجام دے رہا تھا۔ ایسے میں وہ ہندوستان کےلئے بھی بڑا خطرہ تھا۔

ذرائع کے مطابق عاصم عمرکےساتھ جودوسرے مبینہ دہشت گرد مارے گئے، ان میں زیادہ ترپاکستانی ہی تھے۔ سیکورٹی اہلکاروں نےانہیں افغانستان کے جنوبی ہیلمنڈ صوبہ میں ایک آپریشن میں مارگرایا۔ این ڈی ایس افغانستان کے مطابق، امریکہ اورافغانستان کے سیکورٹی اہلکاروں نے موسیٰ کالا ضلع میں طالبان کے کیمپ پرحملہ بولا۔ انہوں نے بتایا کہ عاصم عمر کوطالبان کےایک کیمپ میں دفن کردیا گیا ہے۔

پوری رات چلا تھا آپریشن

افغانستان اورامریکی فوج کے ذریعہ کئےگئے مشترکہ آپریشن میں طویل وقت لگا۔ یہ آپریشن 22  اور23 ستمبرکی رات میں چلایا گیا۔ اس میں امریکہ نے سیکورٹی اہلکاروں کو ایئر سپورٹ دیا۔ عاصم عمرکےعلاوہ جو6 دہشت گرد مارے گئے ہیں، ان میں ریحان نام کا مبینہ دہشت گرد بھی ہے، جوایمن الجواہری کے لئے کوریئرکا کام کرتا تھا۔

Loading...
Listen to the latest songs, only on JioSaavn.com