Choose Municipal Ward
    CLICK HERE FOR DETAILED RESULTS
    ہوم » نیوز » عالمی منظر

    دہشت گردی کے خلاف جنگ: امریکہ سے پاکستان کی مالی امداد بند

    واشنگٹن۔ امریکہ نے پاکستان کو دہشت گردی کے خلاف جنگ کے لئے دی جانے والی 45 کروڑ ڈالر کی امداد روک لی ہے۔

    • UNI
    • Last Updated: May 07, 2016 05:09 PM IST
    • Share this:
    • author image
      NEWS18-Urdu
    دہشت گردی کے خلاف جنگ: امریکہ سے پاکستان کی مالی امداد بند
    واشنگٹن۔ امریکہ نے پاکستان کو دہشت گردی کے خلاف جنگ کے لئے دی جانے والی 45 کروڑ ڈالر کی امداد روک لی ہے۔

    واشنگٹن۔  امریکہ نے پاکستان کو دہشت گردی کے خلاف جنگ کے لئے دی جانے والی 45 کروڑ ڈالر کی امداد روک لی ہے کیونکہ اس نے طالبان اور حقانی نیٹ ورک کے دہشت گردوں کے خلاف کارروائی کا اپنا وعدہ پورا نہیں کیا۔ امریکی کانگریس کی اسلحہ سروس کمیٹی نے قومی دفاع ٹریبیونل قانون 2017 کومنظوری دیتے وقت اپنے خطے میں حقاني نیٹ ورک کے دہشت گردوں کے خلاف کارروائی میں پاکستان کے عزم پر سوال اٹھایا اور اسے اس کام کے لئے دی جانے والی امداد روک دی۔


    قابل ذکر ہے کہ پاکستان نے امریکہ سے وعدہ کیا تھا کہ وہ اپنی سر زمین کا استعمال کر کے افغانستان میں دہشت گردانہ حملہ کرنے والے حقانی نیٹ ورک کے دہشت گردوں کے خلاف کارروائی کرے گا۔ اس بنیاد پر ہی امریکی انتظامیہ نے کانگریس سے پاکستان کو 45 کروڑ ڈالر کی رقم دینے کی سفارش کی تھی لیکن کانگریس کے مطابق پاکستان نے اس وعدے کو پورا نہیں کیا۔ حقانی نیٹ ورک افغانستان میں امریکی اور ہندوستانی ٹھکانوں کو بھی اپنا نشانہ بناتا رہا ہے ۔ کابل اور دیگر مقامات میں واقع ہندوستانی سفارت خانے اور قونصل خانے پر وہ کئی بار حملے کر چکا ہے۔


    کانگریس کی اسلحہ سروس کمیٹی نے دہشت گردی سے دفاع کے لئے 1.1 ارب ڈالر کی رقم جاری کرنے کی منظوری دی ہے جس میں سے 90 کروڑ ڈالر کی رقم پاکستان کو دی جائے گی۔ اسلحہ سروس کمیٹی کے فیصلے پر ابھی کانگریس کی دیگر کمیٹیاں بھی غور وخوض کریں گی۔ پاکستان کو دی جانے والی 45 کروڑ ڈالر کی رقم 74 کروڑ 20 لاکھ ڈالر کی اس رقم کے علاوہ ہے جس کی سفارش امریکی انتظامیہ نے کانگریس سے کی ہے۔

    First published: May 07, 2016 05:09 PM IST
    corona virus btn
    corona virus btn
    Loading