ہوم » نیوز » عالمی منظر

افغانستان کو 470 کروڑ روپئے کی مدد دے گا امریکہ، طالبان سے متعلق کہی یہ بڑی بات

امریکہ میں جو بائیڈن انتظامیہ (Joe Biden Government) نے افغانستان (Afghanistan) کے لوگوں کے لئے معاشی مدد دینے کا اعلان کیا ہے۔ وہ افغانستان کو تقریباً 64 ملین ڈالر یعنی تقریباً 470 کروڑ روپئے کی مدد کرنے جا رہا ہے۔

  • Share this:
افغانستان کو 470 کروڑ روپئے کی مدد دے گا امریکہ، طالبان سے متعلق کہی یہ بڑی بات
افغانستان کو 470 کروڑ روپئے کی مدد دے گا امریکہ، طالبان سے متعلق کہی یہ بڑی بات

واشنگٹن: افغانستان پر قبضے کے بعد طالبان (Taliban) نے عبوری حکومت (Taliban Government) کی تشکیل کی ہے۔ اب امریکہ (America) نے افغانستان سے متعلق اہم فیصلہ کیا ہے۔ امریکہ میں جو بائیڈن انتظامیہ (Joe Biden Government) نے افغانستان (Afghanistan) کے لوگوں کے لئے معاشی مدد دینے کا اعلان کیا ہے۔ وہ افغانستان کو تقریباً 64 ملین ڈالر یعنی تقریباً 470 کروڑ روپئے کی مدد کرنے جا رہا ہے۔


اقوام متحدہ میں امریکی سفیر لنڈا تھمامپسن- گرینڈ فیلڈ (Linda Thompson-Greenfield) نے کہا ہے کہ افغانستان میں صورتحال انتہائی تشویشناک ہے۔ گرین فیلڈ نے جینیوا میں افغانستان پر منعقدہ انسانی اجلاس میں طالبان سے اس کے وعدے بنائے رکھنے کی اپیل کی اور اس کے (طالبان) کے ذریعہ امداد تقسیم میں رخنہ اندازی کرنے کی خبروں کا ذکر کیا۔


اقوام متحدہ  بھی دے گا دو کروڑ


امریکہ کے علاوہ اقوام متحدہ نے بھی افغانستان میں انسانی مہم کی حمایت کرنے کے لئے دو کروڑ امریکی ڈالر دینے کا اعلان کیا ہے۔ جنرل سکریٹری اینتونیو گتاریس نے کہا کہ جنگ سے متاثرہ ملک میں لوگ دہائیوں کے درد اور عدم تحفظ کے بعد شاید اپنے سب سے خطرناک وقت کا سامنا کر رہے ہیں۔ بین الاقوامی برادری کے لئے اب ان کے ساتھ کھڑا ہونے کا وقت ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ افغانستان کے لوگوں کو کھانا، دوا، طبی خدمات، صاف ستھرا پانی، صٖفائی ستھرائی اور تحفظ کی فوری ضرورت ہے۔

دوسری جانب، افغانستان میں طالبان کے کنٹرول حاصل کرنے کے بعد پیدا ہونے والے معاشی بحران کے نتیجے میں اقوام متحدہ کے ہائی کمشنر برائے مہاجرین بے گھر افراد کی صورت حال کا جائزہ لینے کے لئے کابل پہنچ گئے ہیں۔ یو این ہائی کمشنر فلیپو گرانڈی نے کہا ہے کہ افغانستان کے لیے امدادی کی ضرورت ہے، 35 لاکھ بے گھرافراد کی صورتحال کا جائزہ لیں گے۔

اقوام متحدہ کا 60 کروڑ ڈالر کا مطالبہ
اقوام متحدہ جنیوا میں ایک امدادی کانفرنس کا انعقاد کررہی ہے، جس کا مقصد افغانستان میں طالبان کے قبضے کے بعد وہاں انسانی بحران سے نمٹنے کے لئے 60 کروڑ ڈالر سے زائد اکٹھا کیا جا سکے۔ غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ مہینے طالبان کے کابل پر قبضے سے پہلے بھی آدھی آبادی یا ایک کروڑ 80 لاکھ لوگ امداد پر انحصار کرتے تھے۔ اقوام متحدہ کے عہدیداروں اور امدادی گروپس نے خبردار کیا کہ خشک سالی، نقدی اور خوراک کی کمی کی وجہ سے یہ تعداد بڑھتی ہوئی نظر آرہی ہے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Sep 14, 2021 07:41 AM IST