உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    افغانستان سے اساتذہ ، عملہ اور طلبا سمیت 353 افرادکو لیکر طیارہ کابل سے دوحہ کیلئے روانہ

    عہدیدار نے کہا کہ یہ ابھی تک واضح نہیں ہے کہ طیارے میں کتنے امریکی تھے۔

    عہدیدار نے کہا کہ یہ ابھی تک واضح نہیں ہے کہ طیارے میں کتنے امریکی تھے۔

    افغانستان کی امریکن یونیورسٹی ( American University of Afghanistan) کے اساتذہ ، عملہ اور طلبا سمیت 353 افراد مسافروں میں شامل تھے ، جو افغانستان سے لوگوں کو لے جانے والے سب سے بڑے طیارے میں سوار تھے۔

    • Share this:
      کابل: افغانستان سے امریکی فوجیوں کے مکمل انخلا کے بعد 350 سے زائد افراد کو لے جانے والی نویں انخلا کی پرواز نے دارالحکومت کابل ( flights departed Kabul )  کوچھوڑ دیا ۔ ایک سینئر قطری عہدیدار نے سی این این  (senior Qatari government official tells CNN) کو یہ اطلاع دی ۔ طیارہ اتوار کو لوگوں کو لے کر قطر کے دارالحکومت دوحہ  اساتذہ ، عملہ اور طلبا سمیت 353(Doha) کے لیے کابل سے روانہ ہوا۔ افغانستان کی امریکن یونیورسٹی ( American University of Afghanistan)  کے اساتذہ ، عملہ اور طلبا سمیت 353 افراد مسافروں میں شامل تھے ، جو افغانستان سے لوگوں کو لے جانے والے سب سے بڑے طیارے میں سوار تھے۔
      عہدیدار نے کہا کہ یہ ابھی تک واضح نہیں ہے کہ طیارے میں کتنے امریکی تھے۔ افغانستان ، نیدرلینڈز ، ڈنمارک اور آسٹریلیا کے شہری بھی روانہ ہونے والوں میں شامل تھے۔
      یہ لوگ اپنی آخری منزل تک روانگی تک دوحہ میں رہیں گے۔

      امریکی میڈیا نے رواں ماہ کے شروع میں اطلاع دی تھی کہ امریکہ کا ارادہ ہے کہ اس سال کے آخر تک افغانستان سے انخلا کی پروازیں دوبارہ شروع کی جائیں۔ جب تک یہ شروع نہیں ہوتا ، امریکی محکمہ خارجہ افغانستان سے قطر کے لیے پروازوں کا بندوبست کرے گا۔

       
      Published by:Sana Naeem
      First published: