اپنا ضلع منتخب کریں۔

    ایران میں موٹر سائیکلوں پر سوار مسلح افراد نے مظاہرین پر کی فائرنگ، کم از کم 5 افراد ہلاک اور کئی افراد زخمی

    حیاتی نے کہا کہ زخمیوں میں سے کچھ افراد کی حالت تشویشناک ہے

    حیاتی نے کہا کہ زخمیوں میں سے کچھ افراد کی حالت تشویشناک ہے

    خوزستان کے نائب گورنر ولی اللہ حیاتی نے سرکاری ٹیلی ویژن کو بتایا کہ حملہ آوروں نے شام 5:30 بجے خودکار ہتھیاروں سے حملہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ ہلاک ہونے والوں میں تین مرد، ایک عورت اور ایک لڑکی شامل ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • IRAN
    • Share this:
      سرکاری میڈیا نے بدھ کو ایک نامعلوم اہلکار کے حوالے سے بتایا کہ ایران کے جنوب مغربی صوبہ خوزستان میں مظاہرین اور سکیورٹی فورسز پر دہشت گرد عناصر کی جانب سے گولی چلنے سے کم از کم پانچ افراد ہلاک ہو گئے۔ سرکاری خبر رساں ایجنسی آئی ار این اے کے مطابق دو موٹر سائیکلوں پر سوار مسلح اور دہشت گرد عناصر ایذہ (Izeh) شہر کے ایک مرکزی بازار میں پہنچے اور وہاں مظاہرین اور سیکورٹی فورسز پر فائرنگ کر دی، جس سے پانچ افراد ہلاک اور کم از کم 10 زخمی ہو گئے۔

      خوزستان کے نائب گورنر ولی اللہ حیاتی نے سرکاری ٹیلی ویژن کو بتایا کہ حملہ آوروں نے شام 5:30 بجے خودکار ہتھیاروں سے حملہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ ہلاک ہونے والوں میں تین مرد، ایک عورت اور ایک لڑکی شامل ہے۔ حیاتی نے کہا کہ زخمیوں میں سے کچھ کی حالت تشویشناک ہے، انہوں نے کہا کہ زخمیوں میں پولیس اہلکار بھی شامل ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ صورتحال اب پرسکون ہے اور حملہ آوروں کی تلاش جاری ہے۔


      اطلاع کے مطابق حملے کی ذمہ داری فوری طور پر قبول نہیں کی گئی۔ اس سے قبل بھی شیراز میں شاہ چراغ کے مزار پر 26 اکتوبر کو ایک مسلح حملے میں کم از کم 13 افراد ہلاک ہو گئے تھے جس کی ذمہ داری اسلامک اسٹیٹ گروپ نے قبول کی تھی۔ 16 ستمبر کو مہسا امینی (Mahsa Amini) کی موت کے بعد سے ایران میں حجاب مخالف مظاہرے جاری ہیں۔


      یہ بھی پڑھیں:


      حکام کے مطابق ان مظاہروں میں جھڑپیں ہوئی ہیں جن میں درجنوں افراد ہلاک ہوئے ہیں۔ جن میں بنیادی طور پر مظاہرین کے ساتھ ساتھ سیکورٹی فورسز کے ارکان بھی شامل ہیں۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: