ہوم » نیوز » عالمی منظر

صومالیہ کے ہوٹل میں حملہ، کابینی وزیر سمیت 15 ہلاک ، الشباب نے لی ذمہ داری

موغادیشو: صومالیہ کے دارالحکومت میں القاعدہ سے وابستہ الشباب دہشت گردوں کی طرف سے ایک ہوٹل پر کئے گئے حملے میں ایک کابینی وزیر سمیت 15 لوگوں کی موت ہوگئی ہے۔

  • Agencies
  • Last Updated: Jun 27, 2016 12:11 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
صومالیہ کے ہوٹل میں حملہ، کابینی وزیر سمیت 15 ہلاک ، الشباب نے لی ذمہ داری
علامتی تصویر

موغادیشو: صومالیہ کے دارالحکومت میں القاعدہ سے وابستہ الشباب دہشت گردوں کی طرف سے ایک ہوٹل پر کئے گئے حملے میں ایک کابینی وزیر سمیت 15 لوگوں کی موت ہوگئی ہے۔ پولیس نے اتوار کو یہ اطلاع دی۔ حملے میں چار حملہ آوروں کی بھی جان گئی ہے۔ ماہ رمضان میں اس ہوٹل پر یہ دوسرا حملہ ہے۔ پولیس کے سینئر افسر کیپٹن محمد حسین نے کہا کہ وزیر اعظم کے دفتر میں وزیر مملکت بی محمد حمزہ مرنے والوں میں شامل ہیں۔ ان کی لاش کو ناسا هبلود ہوٹل کی منہدم عمارت سے باہر نکال لیا گیا ہے۔ پولیس اور اسپتال ذرائع کے مطابق حملے میں کم سے کم 34 افراد زخمی ہوئے ہیں۔

ہفتہ کو ہوئے اس حملے میں ایک خودکش حملہ آور نے دھماکہ خیز مواد سے بھری گاڑی میں عمارت کے باہر دھماکے کر لیا تھا، اس کے بعد مسلح افراد نے ناسا هبلود ہوٹل پر دھاوا بول دیا اور کئی گھنٹوں تک حملہ جاری رہا۔ خصوصی سیکورٹی فورسز نے ہوٹل میں چھپے تین حملہ آوروں کو بھی مار گرایا ۔ الشباب نے ٹیلی گرام اسمارٹ فون اپلی کیشن کے ذریعے اس حملے کی ذمہ داری لی۔

First published: Jun 27, 2016 12:11 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading