برطانیہ میں مقیم خالصتانی علیحدگی پسندوں کو کیاجائےملک بدر، ہندوستانی ہائی کمیشن کا مطالبہ

امرت پال سنگھ مفرور ہے اور پنجاب، ہریانہ اور اتراکھنڈ میں پولیس اہلکار چوکس ہیں۔

امرت پال سنگھ مفرور ہے اور پنجاب، ہریانہ اور اتراکھنڈ میں پولیس اہلکار چوکس ہیں۔

لندن میں حکام نے ہرجیت سنگھ، منروپ سنگھ، مندیپ سنگھ اور راجندر سنگھ کی شناخت کی ہے۔ ان چاروں کے پاس ہندوستانی پاسپورٹ ہیں اور وہ کئی سال سے برطانیہ میں مقیم ہیں اور علیحدگی کی تحریک میں سرگرم عمل ہیں۔

  • News18 Urdu
  • Last Updated :
  • Punjab, India
  • Share this:
    گزشتہ ہفتے لندن میں ہندوستانی ہائی کمیشن (Indian High Commission in London) کی توڑ پھوڑ کے بعد حکومت ہند نے برطانیہ میں حکام پر زور دیا ہے کہ وہ تشدد میں ملوث متعدد افراد کو ملک بدر کریں۔ ملوث افراد میں سے کچھ کے پاس ہندوستانی پاسپورٹ ہیں اور وہ نام نہاد ’سیاسی ظلم و ستم‘ کا حوالہ دیتے ہوئے برطانیہ میں پناہ حاصل کیے ہوئے ہیں لیکن وہ خالصتانی علیحدگی پسند تحریک اور برطانیہ اور دیگر جگہوں پر ہندوستانی تارکین وطن کے خلاف حملوں میں ملوث بھی ہیں۔

    سی این این نیوز18 کے مطابق ان افراد میں سے ایک اوتار کھنڈا (Avtar Khanda) کئی سال سے برطانیہ میں مقیم ہیں اور اس تحریک کے سرکردہ رہنماؤں میں سے ایک ہیں۔ اس نے ہندوستان میں سیاسی ظلم و ستم کا دعویٰ کرتے ہوئے برطانیہ میں سیاسی پناہ کی درخواست کی۔ اوتار سنگھ کھنڈا کو لندن میں انڈین ہائی کمیشن کے احاطے میں توڑ پھوڑ کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔ کھنڈا 19 مارچ کو انڈین ہائی کمیشن کی بالکونی پر چڑھ گیا، قومی پرچم کو نیچے کھینچ کر اس کی توہین کی اور پھر فلیگ پول پر خالصتانی جھنڈا لگا دیا۔

    حکومت ان افراد کو جوابدہ بنانا چاہتی ہے اور احتجاج میں ان کے ملوث ہونے کی تحقیقات کے لیے انہیں ہندوستان واپس لانا چاہتی ہے۔ حکومت نے برطانیہ کی حکومت پر زور دیا ہے کہ انہیں جلد از جلد ہندوستان واپس بھیج دیا جائے۔ اس پیش رفت سے واقف لوگوں نے یہ بھی کہا کہ علیحدگی پسند تحریک سے وابستہ کچھ افراد کے پاس برطانوی پاسپورٹ بھی ہیں۔

    سی این این نیوز18کی ایک الگ رپورٹ پیش رفت سے واقف لوگوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا گیا ہے کہ کھنڈا بیرون ملک سکھ نوجوانوں کی بنیاد پرستی کے پیچھے مصروف بھی ہے۔ اس میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ کھنڈا ایک بنیاد پرست علیحدگی پسند مبلغ امرت پال سنگھ کا مین ہینڈلر ہے۔

    یہ بھی پڑھیں: 

    لندن میں حکام نے ہرجیت سنگھ، منروپ سنگھ، مندیپ سنگھ اور راجندر سنگھ کی شناخت کی ہے۔ ان چاروں کے پاس ہندوستانی پاسپورٹ ہیں اور وہ کئی سال سے برطانیہ میں مقیم ہیں اور علیحدگی کی تحریک میں سرگرم عمل ہیں۔ ان افراد کے پاس اوورسیز سٹیزن شپ آف انڈیا (OCI) کارڈ بھی ہے۔

    انہوں نے حالیہ مظاہروں کو منظم کرنے اور ہندوستانی حکومت کے خلاف تشدد بھڑکانے میں اہم کردار ادا کیا۔
    Published by:Mohammad Rahman Pasha
    First published: