உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Azadi ka Amrit Mahotsav:امریکہ کے بوسٹن شہر میں منایا جائے گا ہندوستان کی آزادی کا خصوصی جشن،220 فٹ طویل پرچم لہرایا جائے گا

    امریکہ کے شہر بوسٹن میں منایا جائے ہندوستان کی آزادی کا خصوصی جشن۔

    امریکہ کے شہر بوسٹن میں منایا جائے ہندوستان کی آزادی کا خصوصی جشن۔

    Azadi ka Amrit Mahotsav: امریکہ کی تاریخ میں پہلی بار انڈیا ڈے پریڈ میں 32 ممالک کے لوگ شرکت کرنے جا رہے ہیں۔ مرکزی وزیر پیوش گوئل نے اس موقع پر پہلے سے ریکارڈ شدہ پیغام بھیجا ہے۔

    • Share this:
      Azadi ka Amrit Mahotsav: ہندوستان کی آزادی کی 75ویں سالگرہ کا جشن امریکہ کے شہر بوسٹن میں ایک خاص انداز میں منایا جائے گا۔ اس میں 32 ممالک شرکت کریں گے اور ایک ہوائی جہاز کے ذریعے شہر پر 220 فٹ اونچا ہندوستان-امریکہ کا پرچم لہرایا جائے گا۔

      فیڈریشن آف انڈین ایسوسی ایشن (ایف آئی اے) - نیو انگلینڈ کے صدر ابھیشیک سنگھ نے کہا کہ اس سال ہندوستان کی آزادی کے جشن میں پہلی بار بہت سی چیزیں ہوں گی۔ میساچوسٹس کے گورنر چارلی بیکر نے یوم آزادی کے 75 سال کو 'بھارت دیوس' قرار دیا، جو 15 اگست کو بوسٹن میں انڈیا اسٹریٹ پر اور اس سے ایک دن پہلے 14 اگست کو رہوڈ آئی لینڈ کے اسٹیٹ ہاؤس میں منایا جائے گا۔ اس موقع پر سابق ہندوستانی کرکٹر آر پی سنگھ پریڈ میں گرینڈ مارشل کے طور پر موجود ہو سکتے ہیں۔ ایف آئی اے نیو انگلینڈ 'آزادی کا امرت مہوتسو' کے بینر تلے ہندوستان کی آزادی کے 75 سال کا جشن منا رہا ہے۔

      یہ بھی پڑھیں:

      MP News: تحریک آزادی میں علمائے دین کی قربانیاں کے عنوان سے بھوپال میں تقریب کا آغاز

      MP News: اقبال میدان کے تحفظ کو لے کر مدھیہ پردیش جمعیت علما نے کھولا مورچہ

      یہ بھی پڑھیں:

      Independence Day: این آئی اےنےدہشت گردی کونشانہ بنایا، دہلی میں ISI ماڈیول کا پردہ فاش

      پہلی مرتبہ حصہ لے رہے ہیں 32 ملکوں کے لوگ
      ایف آئی اے نے کہا کہ امریکہ کی تاریخ میں پہلی بار انڈیا ڈے پریڈ میں 32 ممالک کے لوگ شرکت کرنے جا رہے ہیں۔ مرکزی وزیر پیوش گوئل نے اس موقع پر پہلے سے ریکارڈ شدہ پیغام بھیجا ہے۔ اپنے پیغام میں گوئل نے کہا کہ ہندوستان اور امریکہ کے تعلقات ایک طویل سفر طے کر چکے ہیں۔ آج ہم فطری شراکت دار ہیں۔ ہم دوست ہیں اور ہم بہت اہم اتحادی ہیں۔ ہماری شراکت داری اسٹریٹجک ہے، بہت گہری ہے اور اس کی اہم جہتیں ہیں۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: