ہوم » نیوز » عالمی منظر

بلوچستانيوں کا اقوام متحدہ کے باہر پاکستان کے خلاف مظاہرہ ، ہندوستان کے نعرے لگائے

پاکستان کے خلاف بلوچ لوگوں کا مظاہرہ تھمتا نظر نہیں آرہا ہے۔ بلوچ کارکنوں کے ایک گروپ نے آج اقوام متحدہ کے ہیڈ کوارٹر کے باہر پاکستان کے خلاف مظاہرہ کیا۔

  • Agencies
  • Last Updated: Sep 14, 2016 03:37 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
بلوچستانيوں کا اقوام متحدہ کے باہر پاکستان کے خلاف مظاہرہ ، ہندوستان کے نعرے لگائے
Photo: ANI

نیو یارک : پاکستان کے خلاف بلوچ لوگوں کا مظاہرہ تھمتا نظر نہیں آرہا ہے۔ بلوچ کارکنوں کے ایک گروپ نے آج اقوام متحدہ کے ہیڈ کوارٹر کے باہر پاکستان کے خلاف مظاہرہ کیا۔ ان لوگوں نے آزادی کا مطالبہ اور انسانیت کے خلاف پاکستان کے جرائم کا مسئلہ اٹھایا۔

یہ مظاہرہ فری بلوچستان موومنٹ کی جانب سے اقوام متحدہ کے ہیڈ کوارٹر کے 71 ویں سیشن کے دوران باہر سڑک پر کیا گیا ۔ مظاہرین امریکی اور بلوچ پرچم لہرا رہے تھے اور ان کے ہاتھوں میں بلوچستان میں انسانی حقوق کی خلاف ورزی بند کرو، بلوچستان پر بم گرانا بند کرو، پاکستان بلوچستان نہیں ہے ، جیسے نعرے لکھے ہوئے بینر تھے۔

انہوں نے سڑک پر بینر کے اوپر خون سے رنگی 5 گڑیا بھی رکھی تھیں اور سفید بینر پر لکھا تھا، بلوچ بچوں کی حفاظت کریں۔ کچھ مظاہرین کی سفید ٹی شرٹ پر سیاہ رنگ سے لکھا تھا، 'بلوچستان میں انسانی حقوق کی خلاف ورزی۔ کچھ مظاہرین اس طرح کے نعرے لگا رہے تھے کہ ہندوستان بلوچستان کی مدد کرو ، 'بلوچستان کی آزادی ، 'بلوچ لوگوں کا قتل عام بند کرو ، 'اقوام متحدہ، اقوام متحدہ، کہاں ہو تم ، 'پاکستان کو پیسے دینا بند کرو '،' بلوچستان دوسرا بنگلہ دیش ہے 'اور بلوچستان کو توڑنا بند کرو '۔

مظاہرین نے پاکستانی فورسز پر گزشتہ چند سال میں تقریبا 5000 لوگوں کے قتل اور تقریبا 20 ہزار لوگوں کو جبرا غائب کرنے کا بھی الزام لگایا۔ فری بلوچستان موومنٹ نے ایک بیان میں کہا کہ مظاہروں کا مقصد غیر قانونی دھندوں اور بلوچستان میں پاکستانی حکومت کی طرف سے انسانیت کے خلاف انجام دئے جانے والے جرائم '' کا خاکہ پیش کرنا اور بلوچ قومی آزادی کی جدوجہد کے بارے میں آگاہی پیدا کرنا ہے۔

فری بلوچستان موومنٹ کے مطابق یہ اقوام متحدہ کی ذمہ داری ہے کہ وہ اپنے چارٹر کی خلاف ورزی اور بلوچستان میں پاکستان کی طرف سے کی جا ری مظالم کا نوٹس لے۔ تنظیم کے مطابق پاکستان نے 1948 میں جب سے بلوچستان پر قبضہ کیا ہے، وہ انسانی حقوق کے خلاف ورزی کرتا رہا ہے اور معصوم بلوچ لوگوں کو مارتا رہا ہے۔ پاکستانی حکومت نے نشانہ بنا کر قتل کرکے، اندھا دھند بمباری کرکے اور زبردستی غائب کرواکر بلوچ لوگوں کی زندگی کو مشکل بنا دیا ہے۔

First published: Sep 14, 2016 03:36 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading