ہوم » نیوز » عالمی منظر

یوروپی ملک بلغاریہ میں پورا چہرہ ڈھکنے والے برقع کے استعمال پر پابندی

بلغاریہ کی پارلیمنٹ نے پورا چہرہ ڈھکنے والے برقعہ کے استعمال پر پابندی لگانے کا قانون منظور کیا ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Oct 01, 2016 01:21 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
یوروپی ملک بلغاریہ میں پورا چہرہ ڈھکنے والے برقع کے استعمال پر پابندی
مسلم خواتین: علامتی تصویر

لندن۔ يوروپي ملک بلغاریہ کی پارلیمنٹ نے پورا چہرہ ڈھکنے والے برقعہ کے استعمال پر پابندی لگانے کا قانون منظور کیا ہے۔ کل پارلیمنٹ سے اس قانون کو منظوری ملنے کے بعد اب عوامی مقامات پر چہرے کو ڈھکنے والے برقع پر پابندی عائد رہے گی اور سب سے پہلے اس کی خلاف ورزی کرنے پر 200 لیوا (103 یورو یا 114 امریکی ڈالر)، بار بار خلاف ورزی پر 1500 لیوا کے جرمانے کی تجویز ہے۔


تقریبا 13 فیصد مسلم آبادی  والے اس ملک کی مسلم خواتین عام طور پر اپنے بالوں کو ڈھکنے کے لئے ایک سادہ اسکارف کا استعمال کرتی ہیں۔ لیکن حالیہ دنوں میں قدامت پسند مسلم معاشرے کی عورتوں میں برقع پہننے کا چلن بڑھا ہے۔ برقع پر پابندی کے اس قانون کی  ایم یل ڈي تركش مائنارٹي پارٹی نے یہ کہتے ہوئے مخالفت کی ہے کہ اس سے دوسری سیاسی جماعتوں کے ’مذہبی عدم برداشت‘ کا پتہ چلتا ہے۔


اس سے پہلے فرانس اور بیلجیم جیسے ممالک نے بھی برقع پر پابندی لگائی ہے اور یوروپ کے دوسرے ممالک میں بھی ایسے قانون بنانے کا مطالبہ کیا جا رہا ہے۔

First published: Oct 01, 2016 01:20 PM IST