جرمنی میں مسلم خواتین کے برقع پہننے پر جزوی پابندی عائد

جرمنی حکومت نے مسلم خواتین کے برقع پہننے پر جزوی پابندی عائد کردی ہے۔ حکومت کا کہنا ہے اس نے سیکورٹی وجوہات کی یہ پابندی عائد کی ہے

Apr 28, 2017 01:09 PM IST | Updated on: Apr 28, 2017 01:09 PM IST
جرمنی میں مسلم خواتین کے برقع پہننے پر جزوی پابندی عائد

علامتی تصویر

برلن: جرمنی حکومت نے مسلم خواتین کے برقع پہننے پر جزوی پابندی عائد کردی ہے۔ حکومت کا کہنا ہے اس نے سیکورٹی وجوہات کی یہ پابندی عائد کی ہے۔ یہاں دكشا بازو کے پارٹیاں فرانس کے طرز پر مکمل طور برقع پر پابندی لگانے کا مطالبہ کر رہی تھیں، لیکن جرمنی کی حکومت نے برقع پر جزوی پابندی کو ہی منظوری دی ۔

میڈیا کی خبروں کے مطابق یہ پابندی ڈیوٹی پر تعینات انتخابی حکام، ملٹری اور جوڈیشیل عملہ سمیت تقریبا تمام سرکاری حکام پر نافذ ہوگی۔ وہیں مکمل طور پر چہرہ ڈھنکنے پر عائد پابندی میں طبی ملازمین اور پولیس افسران کو چھوٹ دی گئی ہے۔

تاہم خواتین کو اس وقت اپنا چہرہ دکھانا پڑے گا جب ان کی شناختی دستاویز کیلئے انہیں اپنا چہرہ دکھانے کے لئے کہا جائے۔ خیال رہے کہ جمعرات کی شام کو ایوان زیریں نے منظور قانون کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ریاست کا فرض ہے کہ وہ خود کو نظریاتی اور مذہبی طور پر منصفانہ طریقے سے پیش کرے۔

Loading...

Loading...