ہوم » نیوز » عالمی منظر

بنگلہ دیش میں وزیر اعظم مودی کے دورہ کی مخالفت ، پرتشدد جھڑپوں میں چار لوگوں کی موت

Anti Modi Protest In Bangladesh: افسران اور عینی شاہدین نے بتایاکہ ڈھاکہ کی اہم مسجد کے پاس مظاہرین کے گروپ کے درمیان جھڑپ ہوگئی اور پولیس نے آنسو گیس اور ربڑ کی گولیوں سے بھیڑ کو منتشر کیا ۔

  • Share this:
بنگلہ دیش میں وزیر اعظم مودی کے دورہ کی مخالفت ، پرتشدد جھڑپوں میں چار لوگوں کی موت
بنگلہ دیش میں وزیر اعظم مودی کے دورہ کی مخالفت ، پرتشدد جھڑپوں میں چار لوگوں کی موت ۔ تصویر : اے پی ۔

ڈھاکہ : بنگلہ دیش میں وزیر اعظم نریندر مودی کے دورہ کی مخالفت میں جمعہ کو ہوئے پرتشدد مظاہرہ میں کم سے کم چار لوگوں کی موت ہوگئی اور کئی دیگر زخمی ہوگئے ۔ وزیر اعظم مودی بنگلہ دیش کے 50 ویں یوم آزادی کے موقع پر منعقدہ جشن میں شرکت کیلئے ڈھاکہ پہنچے ہیں ۔ چٹگاوں ضلع میں ایک مشہور مدرسہ کے طلبہ اور اسلامی گروپ کے اراکین کی پولیس کے ساتھ جھڑپ میں ان لوگوں کی موت ہوئی۔


چٹگاوں میڈیکل کالج اسپتال میں ایک پولیس افسر علا الدین تعلقدارنے کہا کہ پانچ لوگوں کو زخمی حالت میں اسپتال لے جایا گیا ، جہاں ان میں سے چار کی موت ہوگئی ۔ مقامی میڈیا میں آئی خبروں کے مطابق اسلامی گروپ حفاظت اسلام کے اراکین نے چٹگاوں کے ہاتھاجاری علاقہ میں پولیس تھانوں سمیت سرکاری محکموں پر حملہ کردیا ، جس کے بعد پولیس کو جوابی کارروائی کرنی پڑی ۔


افسران اور عینی شاہدین نے بتایاکہ ڈھاکہ کی اہم مسجد کے پاس مظاہرین کے گروپ کے درمیان جھڑپ ہوگئی اور پولیس نے آنسو گیس اور ربڑ کی گولیوں سے بھیڑ کو منتشر کیا ۔ اس دوران کئی لوگ زخمی ہوگئے ۔ مظاہرین نے براہمن بریا ضلع میں ریلوے اسٹیشن کے آفس میں بھی آگ لگادی ، جس کی وجہ سے ٹرینوں کی آمدورفت بھی رک گئی ۔


کیوں ہورہی ہے مخالفت

وزیر اعظم مودی جمعہ کو بنگلہ دیشی وزیر اعظم شیخ حسینہ کی دعوت پر ڈھاکہ پہنچے ہیں ۔ بتادیں کہ گزشتہ کچھ دنوں پہلے سے کئی مسلم لیڈران اور بائیں بازو کی تنظیمیں وزیر اعظم مودی کے دورہ کی مخالفت میں ریلیاں کررہی تھیں ۔ ان کا دعوی شیخ مجیب الرحمان نے سیکولر ملک کیلئے جدوجہد کی ، جبکہ مودی فرقہ پرست ہیں ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Mar 27, 2021 09:40 AM IST