ہوم » نیوز » عالمی منظر

بنگلہ دیش میں نظر بند قیدیوں کو گولی مارنے کا الزام

ڈھاکہ ۔ انسانی حقوق تنظیم نے الزام لگایا ہے کہ بنگلہ دیش میں سکیورٹی دستے اپوزیشن پارٹیوں کے حامیوں کونظر بندی کے دوران ان کے پیروں میں گولی ماررہے ہیں اور اس سے متعلق آئرش ریپبلکن آرمی کے ہتھکنڈے کو عمل میں لایا جارہا ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Sep 29, 2016 07:22 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
بنگلہ دیش میں نظر بند قیدیوں کو گولی مارنے کا الزام
ڈھاکہ ۔ انسانی حقوق تنظیم نے الزام لگایا ہے کہ بنگلہ دیش میں سکیورٹی دستے اپوزیشن پارٹیوں کے حامیوں کونظر بندی کے دوران ان کے پیروں میں گولی ماررہے ہیں اور اس سے متعلق آئرش ریپبلکن آرمی کے ہتھکنڈے کو عمل میں لایا جارہا ہے۔

ڈھاکہ ۔ انسانی حقوق تنظیم نے الزام لگایا ہے کہ بنگلہ دیش میں سکیورٹی دستے اپوزیشن پارٹیوں کے حامیوں کونظر بندی کے دوران ان کے پیروں میں گولی ماررہے ہیں اور اس سے متعلق آئرش ریپبلکن آرمی کے ہتھکنڈے کو عمل میں لایا جارہا ہے۔ انسانی حقوق تنظیم نے اس سے متعلق اپنی رپورٹ میں سکیورٹی دستوں کے ذریعہ حراست میں لئے گئے چند افراد کا بھی حوالہ دیا ہے جنہیں گولی ماری گئی لیکن سکیورٹی دستوں نے ان الزامات کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ مسلح مجرموں کے ساتھ فائرنگ کے دوران انہیں اپنی حفاظت کے لئے گولیاں چلانی پڑیں۔


تنظیم کا کہنا ہے کہ بنگلہ دیش میں سکیورٹی دستے طویل عرصے سے لوگوں کو حراست میں لے کر انہیں گولی مارتے ہیں اور بعد میں یہ بتاتے ہیں کہ وہ مڈبھیڑ میں مارے گئے۔

First published: Sep 29, 2016 07:22 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading