ہوم » نیوز » عالمی منظر

چین نے بی بی سی ورلڈ نیوز کی نشریات پر عائد کی پابندی ، قواعد کی خلاف ورزی کا لگایا الزام

چین کا کہنا ہے کہ بی بی سی ورلڈ نیوز نے قواعد کی خلاف ورزی کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ خبریں حقائق پرمبنی اور غیر جانبدار ہونی چا ہئے اور نا کہ چین کے قومی مفادات کو نقصان پہنچا نے والی ۔ اس لئے ملک میں ایک سال کے لئے بی بی سی کی درخواست قبول نہیں کی جا ئے گی ۔

  • Share this:
چین نے بی بی سی ورلڈ نیوز کی نشریات پر عائد کی پابندی ، قواعد کی خلاف ورزی کا لگایا الزام
چین نے بی بی سی ورلڈ نیوز کی نشریات پر عائد کی پابندی ، قواعد کی خلاف ورزی کا لگایا الزام (Reuters)

چین کی حکومت نے ملک میں بی بی سی ورلڈ نیوز کے ٹیلی ویژن اور ریڈیو نشریات پر پابندی عائد کردی ہے۔ بی بی سی نے بتایا کہ اس پابندی کی وجہ چین میں کورونا وائرس کی وبا اور اقلیتی ایغور مسلمانوں کے استحصال سے متعلق رپورٹنگ کر نا ہے ۔ بی بی سی نے کہا کہ چین کی حکومت کےاس فیصلے سے وہ ’مایوس ‘ ہیں ۔ حال ہی میں برطانیہ نے چین کے سرکاری چینل سی جی ٹی این کا لائسنس منسوخ کردیا تھا۔


چین کا کہنا ہے کہ بی بی سی ورلڈ نیوز نے قواعد کی خلاف ورزی کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ خبریں حقائق پرمبنی اور غیر جانبدار ہونی چا ہئے اور نا کہ چین کے قومی مفادات کو نقصان پہنچا نے والی ۔ اس لئے ملک میں ایک سال کے لئے بی بی سی کی درخواست قبول نہیں کی جا ئے گی ۔


قابل ذکر ہے کہ برطانوی میڈیا ریگیولیٹر آفکوم نے چائنا گلوبل ٹیلی ویژن نیٹ ورکس (سی جی ٹی این) کا برطانیہ میں نشریات کا لائسنس منسوخ کر دیا تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ تحقیقات میں انکشاف ہوا ہے کہ لائسنس کو غلط طریقے سے اسٹار چائنا میڈیا لمیٹڈ نے قابو میں کیا ہوا تھا۔


خیال رہے کہ ہانگ کانگ کے معاملے پر چین اور برطانیہ کے درمیان حال میں بیانات کا تبادلہ ہوا تھا اور تعلقات مزید کشیدہ ہونے کے خدشات ظاہر کیے جا رہے تھے۔ چین نے گزشتہ ماہ اعلان کیا تھا کہ ہانگ کانگ کے عوام کے لیے برطانیہ کا قومی پاسپورٹ (بی این او) مزید تسلیم نہیں کیا جائے گا ۔

یو این آئی کے ان پٹ کے ساتھ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Feb 12, 2021 09:33 AM IST