آرٹیکل 370 پر پاکستان نے دنیا بھر سے طلب کی مدد، کوئی نہیں آیا ساتھ

پاکستان کی لاکھ کوششوں کے بعد بھی کشمیر کے مسئلے پر دنیا کا کوئی بھی ملک پاکستان کا ساتھ دینے کیلئے اس کے حق میں کھل کر سامنے نہیں آیا ہے۔

Aug 08, 2019 10:38 AM IST | Updated on: Aug 08, 2019 03:50 PM IST
آرٹیکل 370 پر پاکستان نے دنیا بھر سے طلب کی مدد، کوئی نہیں آیا ساتھ

کشمیر کے مسئلے پر دنیا کے کسی بھی ملک نے پاکستان کا واضح طو پر نہیں دیا ساتھ۔ (فائل تصویر)۔

برطانیہ نے بدھ کو کہا کہ اس نے جموں۔کشمیر کو خصوصی ریاست کا درجہ دینے والے آرٹیکل کو ختم کرنے کے ہندستان کے فیصلے پر اپنی فکرمندی ہندستان کے سامنے رکھی ہے۔ برطانیہ کے وزیر خارجہ ڈومینک راب نے کہا کہ انہوں نے اپنےہندستانی ہم منصب ایس جے شنکر سے بات کی ہے اور ریاست کو دو مرکزکے زیر انتظام علاقے میں تقسیم کرنے کے منصوبے کے سلسلے میں اس ہفتے کی شروعات میں کئے گئے اعلان پر ہندستان کے رخ کے بارے میں جانکاری لی۔

برطانیہ کے وزیر داخلہ ڈومینک راب نے کہا، میری تقرری کے بعد سے میں نے ہندستانی وزیر خارجہ سے دو مرتبہ بات کی ہے اور میں نے ان سے بدھ کو بھی بات کی ہے"۔

اس سے پہلے برطانیہ نے معاملے پر نظر رکھنے کی کہی تھی بات

برطانیہ کے وزیر داخلہ راب نے کہا 'ہم نے حالات پر اپنی کچھ فکرمندی ظاہر کی ہے اور امن کی بات کی ہے لیکن ہندستانی حکومت کے نظریے سے بھی حالات کو سمجھا'۔

Loading...

اس  سے  پہلے  کے بیان  میں ایف  سی او کے ایک  ترجمان  نے کہا  تھا کہ برطانیہ حالات  پر  نزدیکی  سے  نظر  رکھ  رہا  ہے اور حالات پر امن رکھنے کی مانگ کی حمایت کرتا ہے۔

بتا دیں کہ پاکستان کی لاکھ کوششوں کے بعد بھی کشمیر کے مسئلے پر دنیا کا کوئی بھی ملک پاکستان کا ساتھ دینے کیلئے اس کے حق میں کھل کر سامنے نہیں آیا ہے۔

Loading...