உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Big News: پاکستانی فوج کا طیارہ لاپتہ، کورکمانڈر سمیت کئی اہم شخصیات ہیں سوار

    Big News: پاکستانی فوج کا طیارہ لاپتہ، کورکمانڈر سمیت کئی اہم شخصیات ہیں سوار  ۔ علامتی تصویر ۔

    Big News: پاکستانی فوج کا طیارہ لاپتہ، کورکمانڈر سمیت کئی اہم شخصیات ہیں سوار ۔ علامتی تصویر ۔

    Pakistan Army Helicopter Goes Missing : پاکستان سے ایک بڑی خبر سامنے آرہی ہے ۔ پاکستانی فوج کا ایک طیارہ لاپتہ ہوگیا ہے ، جس میں فوج کے کئی سینئر افسران سوار تھے ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • pakistan | islamabad | lahore
    • Share this:
      نئی دہلی : پاکستان سے ایک بڑی خبر سامنے آرہی ہے ۔ پاکستانی فوج کا ایک طیارہ لاپتہ ہوگیا ہے ، جس میں فوج کے کئی سینئر افسران سوار تھے ۔ پاکستانی فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ پاکستان آرمی ایوی ایشن کے ہیلی کاپٹر کا بلوچستان کے علاقے لسبیلہ میں سیلاب ریلیف کارروائیوں کے دوران رابطہ منقطع ہوگیا ہے ۔ آئی ایس پی آر کے مطابق ہیلی کاپٹر میں کور کمانڈر 12 کور سمیت 6 افراد سوار تھے اور ہیلی کاپٹر سے فلڈ ریلیف آپریشن کا معائنہ کررہے تھے۔


      یہ بھی پڑھئے: پاکستان میں شخص نے پولیس کانسٹیبل کے کاٹے ناک، کان اور ہونٹ، جانئے کیوں


      قابل ذکر ہے کہ بلوچستان میں حالیہ دنوں میں موسلادھار بارشوں کے بعد سیلاب سے شدید تباہی ہوئی ہے، جہاں مرنے والے افراد کی تعداد 130سے تجاوز کرگئی ہے۔ پاکستان کے وزیر اعظم شہباز شریف نے بھی بلوچستان کے سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں امدادی کارروائیوں کا جائزہ لینے کے لیے مختلف اضلاع کا دورہ کیا تھا ۔


      یہ بھی پڑھئے: 20 سال پہلے ممبئی سے دبئی کے لئے نکلی خاتون پہنچی پاکستان، اب وطن لوٹنے کی امید


      ڈان نیوز کی ایک خبر کے مطابق بلوچستان میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران بارش سے متعلقہ حادثات میں مزید 9 افراد جاں بحق ہوچکے ہیں۔ صوبائی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کے مطابق یکم جون سے اب تک بارشوں سے متعلقہ حادثات میں مرنے والے افراد کی تعداد 136 ہو گئی ہے۔

      پی ڈی ایم اے کا کہنا ہے کہ جانی نقصان کے علاوہ بارش کے باعث کئی سڑکیں اور پل سیلاب سے متاثر ہوئے ہیں ۔ لسبیلہ اور سندھ کو ملانے والا پل جو کہ 7 روز قبل ٹوٹا تھا، تاحال اس کی مرمت نہیں کی نہیں کی جاسکی ہے۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: