உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    عجیب و غریب! وہ کیفے جہاں waitress بکنی میں پیش کرتی ہیں Coffee، نوجوان لڑکیوں کے ساتھ ایسا کرتے ہیں لوگ

    امریکہ  (American Bikini Cafe) کا پنک شوگر ایسپریسو کیفے  (Pink Sugar Espresso)  اکثر سوشل میڈیا پر موضوع بحث رہتا ہے۔ اس کیفے کی عجیب بات یہ ہے کہ یہاں کی ویٹریس نیم عریاں (Semi Nude Waitress Serve Coffee)   ہو کر کسٹمرس کو کافی یا دیگر کھانے کی اشیاء پیش کرتی ہے۔

    امریکہ (American Bikini Cafe) کا پنک شوگر ایسپریسو کیفے (Pink Sugar Espresso) اکثر سوشل میڈیا پر موضوع بحث رہتا ہے۔ اس کیفے کی عجیب بات یہ ہے کہ یہاں کی ویٹریس نیم عریاں (Semi Nude Waitress Serve Coffee) ہو کر کسٹمرس کو کافی یا دیگر کھانے کی اشیاء پیش کرتی ہے۔

    امریکہ (American Bikini Cafe) کا پنک شوگر ایسپریسو کیفے (Pink Sugar Espresso) اکثر سوشل میڈیا پر موضوع بحث رہتا ہے۔ اس کیفے کی عجیب بات یہ ہے کہ یہاں کی ویٹریس نیم عریاں (Semi Nude Waitress Serve Coffee) ہو کر کسٹمرس کو کافی یا دیگر کھانے کی اشیاء پیش کرتی ہے۔

    • Share this:
      دنیا میں ایسے کئی عجیب و غریب ہوٹل اور ریستوراں  (Weird Restaurants) ہیں جن کے بارے میں جان کر لوگ دنگ رہ جاتے ہیں۔ یہ تمام ہوٹل اور ریستوراں اپنے مختلف قسم کے قوانین کے بارے میں بحث کا موضوع بنے ہوئے ہیں۔ آج ہم آپ کو ایک ایسے ہی کیفے (Bikini Cafe) کے بارے میں بتانے جارہے ہیں جو اپنے آپ میں انوکھا ہے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ اس کیفے میں ویٹریس کو کافی پیش کرنے کے لیے بکنی (Waitress Wear Bikini to serve coffee)  پہننی پڑتی ہے۔

      امریکہ  (American Bikini Cafe) کا پنک شوگر ایسپریسو کیفے  (Pink Sugar Espresso)  اکثر سوشل میڈیا پر موضوع بحث رہتا ہے۔ اس کیفے کی عجیب بات یہ ہے کہ یہاں کی ویٹریس نیم عریاں (Semi Nude Waitress Serve Coffee)   ہو کر کسٹمرس کو کافی یا دیگر کھانے کی اشیاء پیش کرتی ہے۔ حال ہی میں ڈیلی اسٹار کی ویب سائٹ پر اس کیفے میں کام کرنے والی 19 سالہ لڑکی نے گریس سے بات کی، جس نے اس کیفے میں کام کرنے کا اپنا تجربہ شیئر کیا۔

      waitress serve coffee in bikini in american cafe
      19 سالہ گریس نے بتایا کہ کیفے کا تجربہ کیسا رہا۔ (تصویر: انسٹاگرام)


       بکنی میں  پیش کرنی پڑتی ہے کافی 
      گریس کا کہنا ہے کہ وہ مکمل وقت بکنی اور لانجری بارسٹا یعنی کیفے ویٹریس کے طور پر کام کرتی ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ اس کیفے میں بکنی پہننا ہی سب کچھ نہیں ہے۔ یہاں ویٹریس کو خوبصورت نظر آنا چاہیے، اس کے بال اچھی طرح سے شیڈ ہونے چاہئیں، اس کا میک اپ اچھا ہونا چاہیے اور اس کا رویہ بھی ہونا چاہیے۔ انہوں نے بتایا کہ کیفے میں ویٹریس کو بہت چھوٹی بکنی پہننی پڑتی ہے جس کی وجہ سے بہت سے کسٹمرس وہاں آتے ہیں۔ مگر اس کی وجہ سے انہیں کئی پریشانیوں کا سامنا بھی کرنا پڑتا ہے۔

       ایک کیفے میں کام کرکے گریس نے  بہت بڑی رقم کمائی
      گریس نے بتایا کہ اکثر لوگ ویٹریس کو چھیڑنے لگتے ہیں۔ خود سے جڑے ایک واقعہ کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ایک دفعہ ایک شخص نے ان کا پیچھا کرنا شروع کر دیا۔ اس نے کیفے میں دوسری ویٹریس سے جھوٹ بولنا شروع کر دیا کہ اس کا اور گریس کا افیئر ہے۔ اس کے بعد گریس نے پولیس سے شکایت کی تھی جس کے بعد اس نے جان چھڑائی۔ گریس کے مطابق، اسے کالج کی تعلیم مکمل کرنے کے لیے پیسوں کی ضرورت تھی۔ پھر اس نے اس کیفے میں نوکری جوائن کی تھی۔ گریس نے بتایا کہ جب وہ کیفے سے جڑی  تھیں تو ان کے اکاؤنٹ میں صرف 7600 روپے تھے۔ لیکن صرف 2 ماہ کام کرنے کے بعد، اس نے اپنا ایک اپارٹمنٹ خریدا اور وہ بھی ہوائی میں چھٹیاں بھی منائیں۔ اب وہ اپنے کام کو انجوائے کر رہی ہیں۔

      قومی، بین الاقوامی اور جموں وکشمیر کی تازہ ترین خبروں کےعلاوہ تعلیم و روزگار اور بزنس کی خبروں کے لیے نیوز18 اردو کو ٹویٹر اور فیس بک پر فالو کریں ۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: