உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    یہ مغرب اور اسلام کی جنگ نہیں ہے: چارلس مائیکل

    برسلز ۔ برسلز میں دھماکوں کے 2 ماہ بعد ایک تقریب ہوئی جس میں شاہی خاندان نے بھی شرکت کی۔

    برسلز ۔ برسلز میں دھماکوں کے 2 ماہ بعد ایک تقریب ہوئی جس میں شاہی خاندان نے بھی شرکت کی۔

    برسلز ۔ برسلز میں دھماکوں کے 2 ماہ بعد ایک تقریب ہوئی جس میں شاہی خاندان نے بھی شرکت کی۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      برسلز ۔ برسلز میں دھماکوں کے 2 ماہ بعد ایک تقریب ہوئی جس میں شاہی خاندان نے بھی شرکت کی۔ شاہی محل میں بادشاہ فلپ نے کہا کہ جن شہریوں کی جانیں گئی ہیں اس پر ہمیں انتہائی افسوس اور غم ہے۔ ہم انہیں نہیں بچا سکے لیکن ہم ان کے قاتلوں کو بھی نہیں بخشیں گے۔ ہم انہیں ہر حالت میں کیفر کردار تک پہنچائیں گے ،یہ ہمارا عزم ہے اور ہم بحثیت قوم اسے پورا کرنا جانتے ہیں۔


      شاہ نے اس موقع پر ڈاکٹروں ،پولیس اور ایمرجنسی اہلکاروں کا شکریہ ادا کیا جنہوں نے 22 مارچ کے حملوں میں زخمیوں کی مدد کی تھی۔ انہوں نے مہلوک شہریوں کو خراج تحسین پیش کی۔


      وزیراعظم چارلس مائیکل نے کہا کہ مغرب ہرحال میں اور ہر قیمت پر خطرناک دہشت گرد تنظیم داعش کے دہشت گردوں کو شکست دے گا۔ وزیراعظم نے اس موقع پر واضح لفظو ں میں کہا کہ یہ مغرب اور اسلام کی جنگ نہیں ہے۔ یہ مستقل جنگ ہے اور اس میں وقت لگے گا۔ دہشت گردوں کو روکنے کے لیے ہرممکن اقدام کریں گے اور اس جنگ میں جیت ہماری ہوگی۔ انہوں نے شہریوں سے حوصلہ رکھنے کی اپیل کی۔

      First published: