உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Blast in Lahore: پاکستان کے لاہور شہر میں ایک کے بعد ایک چار زبردست دھماکے، پانچ کی موت اور 20 افراد زخمی

    پاکستان (Pakistan) کے لاہور (Lahore) شہر میں جمعرات کو ایک کے بعد ایک چار زبردست دھماکے (Blast in Lahore) ہوئے، جس میں پانچ لوگوں کی موت ہوگئی ہے۔ اس دھماکے میں 20 افراد بری طرح زخمی بھی ہوئے ہیں۔

    پاکستان (Pakistan) کے لاہور (Lahore) شہر میں جمعرات کو ایک کے بعد ایک چار زبردست دھماکے (Blast in Lahore) ہوئے، جس میں پانچ لوگوں کی موت ہوگئی ہے۔ اس دھماکے میں 20 افراد بری طرح زخمی بھی ہوئے ہیں۔

    پاکستان (Pakistan) کے لاہور (Lahore) شہر میں جمعرات کو ایک کے بعد ایک چار زبردست دھماکے (Blast in Lahore) ہوئے، جس میں پانچ لوگوں کی موت ہوگئی ہے۔ اس دھماکے میں 20 افراد بری طرح زخمی بھی ہوئے ہیں۔

    • Share this:
      لاہور: پاکستان (Pakistan) کے لاہور (Lahore) شہر میں جمعرات کو ایک کے بعد ایک چار زبردست دھماکے (Blast in Lahore) ہوئے، جس میں پانچ لوگوں کی موت ہوگئی ہے۔ اس دھماکے میں 20 افراد بری طرح زخمی بھی ہوئے ہیں۔ یہ دھماکے شہر کے لاہوری گیٹ (Lahori Gate) کے پاس ہوا۔ دھماکہ (Blast near Lahori Gate) اتنا زبردست تھا کہ جائے حادثہ کے آس پاس کی دکانوں اور عمارتوں کی کھڑکیاں ٹوٹ گئیں۔ وہیں پاس میں کھڑی موٹر سائیکلوں کو بھی نقصان پہنچا ہے۔ فی الحال جائے حادثہ پر پولیس پہنچ چکی ہے اور راحت اور بچاو کا کام جاری ہے۔ دھماکہ کے بعد انارکلی بازار کو بند کردیا گیا ہے۔ ساتھ ہی بازار میں اور بم ہونے کا بھی خدشہ ہے۔

      لاہور کے آپریشن کے ڈپٹی انسپکٹر جنرل، ڈاکٹر محمد عابد خان نے جیو نیوز کو بتایا کہ فی الحال جانچ اپنے شروعاتی مرحلے میں ہے، لیکن جلد ہی دھماکہ کے پیچھے کی اصل وجہ کا پتہ لگا لیا جائے گا۔ پولیس افسر نے بتایا کہ دھماکہ کی وجہ سے زمین کے اندر 1.5 فٹ گہرا گڈھا ہوگیا۔ دھماکے میں زخمی ہوئے لوگوں کو شہر کے مایو اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے۔ پولیس نے جیو نیوز سے اس بات کی تصدیق کردی ہے کہ دھماکے لئے پہلے سے ہی بم کو جائے حادثہ پر پلانٹ کیا گیا تھا۔ لاہور گیٹ کے اس علاقے میں ہر روز بڑی تعداد میں لوگ خریداری اور تجارت کے سلسلے میں آتے ہیں۔

      علاقے کو گھیرا گیا

      مایو اسپتال کے افسران نے کہا کہ دھماکہ میں زخمی ہوئے تین لوگوں کی حالت سنگین ہے۔ فی الحال ڈاکٹر ان کی جان بچانے کے لئے کوشش کر رہے ہیں۔ وہیں دیگر زخمیوں کا علاج کیا جا رہا ہے۔ پولیس اور انتظامیہ نے پورے علاقے کو گھیر لیا ہے اور جائے حادثہ سے ثبوتوں کو جمع کیا جا رہا ہے۔ پولیس نے ابھی تک یہ نہیں بتایا ہے کہ یہ ایک آئی ای ڈی تھا یا پھر ایک ٹائم بم تھا۔ سوشل میڈیا پر سامنے آئے ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ فائربریگیڈ کے ملازم مدد کے کاموں میں مصروف ہوئے ہیں۔ دھماکہ کی وجہ سے موٹر سائیکلوں میں آگ لگ گئی، جس بجھایاگیا ہے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: