உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Pak FM Miftah Ismail: ہندوستان سے سبزیاں اور کھانے کی اشیاء درآمد کرنے پر پاکستان کر سکتا غور: پاک وزیر خارجہ مفتاح اسماعیل

    تصویر ٹوئٹر: Jemima Goldsmith

    تصویر ٹوئٹر: Jemima Goldsmith

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • inter, IndiaPakistanPakistan
    • Share this:
      ایک میڈیا رپورٹ کے مطابق تباہ کن سیلاب کی وجہ سے غذائی تحفظ کے خدشات کے درمیان پاکستان نے پیر کے روز کہا کہ وہ ہندوستان سے سبزیاں اور دیگر خوردنی اشیاء درآمد کرنے پر غور کر سکتا ہے۔ پاکستان کے وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل (Miftah Ismail) نے میڈیا کے نمائندوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ حکومت پاکستان حالیہ سیلاب سے پاکستان میں فصلوں کی تباہی کے پیش نظر لوگوں کی سہولت کے لیے ہندوستان سے سبزیاں اور دیگر خوردنی اشیا درآمد کرنے پر غور کر سکتی ہے۔ اسماعیل تباہ کن سیلاب، پاکستانی معیشت کی ابتر حالت اور عمران خان کی زیر قیادت پی ٹی آئی کے احتجاج سمیت متعدد مسائل پر مقامی میڈیا سے بات کر رہے تھے۔

      جیو نیوز نے نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (NDMA) کے حوالے سے بتایا ہے کہ میڈیا رپورٹس کے مطابق پاکستان میں 5.7 ملین سے زیادہ لوگ متاثر ہوئے ہیں کیونکہ پاکستان کو اپنی تاریخ کے بدترین سیلاب کا سامنا ہے۔ ملک میں بچاؤ، راحت اور بحالی کا کام جاری ہے۔ 14 جون سے بارش اور سیلاب سے کم از کم 1,033 افراد ہلاک ہو چکے ہیں جبکہ 1,527 زخمی ہو چکے ہیں۔

      اگست 2019 میں پاکستان کی جانب سے ہندوستان کے ساتھ سفارتی تعلقات کو کم کرنے، نئی دہلی سے اپنے ہائی کمشنر کو واپس بلانے، اسلام آباد میں ہندوستانی ایلچی کو ملک بدر کرنے اور دو طرفہ تجارت کو معطل کرنے کے فیصلے کے بعد دونوں ممالک کے درمیان تعلقات ایک نئی نچلی سطح پر آگئے۔ 4 اگست کو مرکزی وزیر مملکت برائے امور خارجہ وی مرلیدھرن نے کہا کہ ہندوستان اور پاکستان کے درمیان 2019 سے تجارت کی بحالی کے سلسلے میں کوئی پیش رفت نہیں ہوئی ہے۔

      پاکستان بھر سے 14 جون کے مجموعی اعداد و شمار سے پتہ چلتا ہے کہ 3,451.5 کلومیٹر سڑک کو نقصان پہنچا ہے، 149 پل گر گئے ہیں، اور 170 دکانیں تباہ ہو گئی ہیں۔ مجموعی طور پر 949,858 مکانات جزوی یا مکمل طور پر تباہ ہو چکے ہیں۔ ان میں سے 662,446 مکانات کو جزوی نقصان پہنچا ہے اور 287,412 مکمل طور پر تباہ ہو چکے ہیں۔ جبکہ 719,558 مویشی بھی ہلاک ہو چکے ہیں۔ سیلاب نے لاکھوں لوگوں کی زندگیوں کو متاثر کیا جس کے بعد حکومت پاکستان نے ’’قومی ایمرجنسی‘‘ کا اعلان کیا۔

      یہ بھی پڑھیں: 

      بلیک آؤٹ فٹ میں Akanksha Puri کی اب تک کی سب سے بولڈ تصویریں، میکا سنگھ نے یوں دیا ردعمل

      یہ بھی پڑھیں: 

      Trade with Pakistan: پاکستان کے ساتھ تجارت ممکن نہیں! ’پہلےسرحدپاردہشت گردی کوکیاجائےختم‘

      یہ پوچھے جانے پر کہ کیا پاکستان کے ساتھ تجارتی تعلقات کی بحالی کے حوالے سے کوئی پیش رفت ہوئی ہے، وزیر نے راجیہ سبھا کے تحریری جواب میں کہا کہ اگست 2019 میں پاکستان نے ہندوستان کے ساتھ دو طرفہ تجارت کو معطل کرنے کا اعلان کیا تھا۔ پاکستان نے تجارت پر پابندی میں جزوی طور پر نرمی کی تھی۔ ستمبر 2019 میں ہندوستان کے ساتھ بعض دواسازی کی مصنوعات میں تجارت کی اجازت دے کر۔ اس کے بعد سے پاکستان کے ساتھ تجارت کی بحالی کے حوالے سے کوئی پیش رفت نہیں ہوئی ہے۔

       
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: