ہوم » نیوز » عالمی منظر

کوروناکاخطرہ:کینیڈانےہندوستان اور پاکستان سےآنےوالی پروازوں پرپابندی میں21جون تک کی توسیع

کینیڈا نے ہندوستان اور پاکستان سے آنے والی پروازوں پر پابندی میں توسیع کردی ہے کیونکہ پہلے 30 روزہ پابندی صرف 22مئی تک ہی عائد کی گئی تھی جو کہ آج ختم ہورہی تھی

  • Share this:
کوروناکاخطرہ:کینیڈانےہندوستان اور پاکستان سےآنےوالی پروازوں پرپابندی میں21جون تک کی توسیع
کینیڈا نے ہندوستان اور پاکستان سے آنے والی پروازوں پر پابندی میں توسیع کردی ہے کیونکہ پہلے 30 روزہ پابندی صرف 22مئی تک ہی عائد کی گئی تھی جو کہ آج ختم ہورہی تھی

ایک سرکاری اعلامیے کے مطابق کینیڈا نے عالمی وبا کورونا وائرس (COVID-19) کی نئی اور تغیر پذیر شکل کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے ہندوستان اور پاکستان سے براہ راست پروازوں پر پابندی میں مزید 21 ماہ تک توسیع کردی ہے۔کینیڈین براڈکاسٹنگ کارپوریشن نیوز کی خبر کے مطابق ہندوستان اور پاکستان سے پروازوں پر پابندی میں توسیع کردی گئی کیونکہ پہلے 30 روزہ پابندی صرف 22 اپریل تک ہی عائد کی گئی تھی ، جو کہ ہفتہ کو ختم ہونے والی تھی۔تاہم کارگو پروازوں کو اجازت دی جائے گی تاکہ ضروری سامان جیسے ٹیکے اور ذاتی حفاظتی سامان کی ترسیل کو برقرار رکھا جاسکے۔ایئر مین کو دیئے گئے ایک نوٹس کے مطابق وزیر ٹرانسپورٹ کی رائے ہے کہ ہوا بازی کی حفاظت اور عوام کے تحفظ کے لئے یہ ضروری ہے۔


کینیڈا نےہندوستان اور پاکستان سے براہ راست پروازوں پر پابندی میں مزید 21 ماہ تک توسیع کردی ہے

کینیڈا نےہندوستان اور پاکستان سے براہ راست پروازوں پر پابندی میں مزید 21 ماہ تک توسیع کردی ہے


چونکہ پابندی کا اطلاق دونوں ممالک سے براہ راست پروازوں پر ہوتا ہے ، پھر بھی مسافر کسی تیسرے ملک کے راستے ہندوستان یا پاکستان سے کینیڈا جاسکتے ہیں۔ اس رپورٹ کے مطابق انہیں کینیڈا میں داخلے کی اجازت سے قبل روانگی کے آخری موقع پر لی گئی کووڈ۔19 ٹیسٹ پر منفی نتیجہ پیش کرنے کی ضرورت ہوگی۔وزیر ٹرانسپورٹ عمر الغابرا (Omar Alghabra) نے ایک سرکاری بریفنگ دیتے ہوئے کہا ہے کہ "COVID-19 اور اس کی مختلف حالتوں میں درآمد کے خطرے کو کم کرنے کے لئے صحت عامہ کے مشوروں کی بنیاد پر یہ پابندی عائد کردی گئی ہے۔"


انہوں نے کہا ، "میں یہ کہہ سکتا ہوں کہ ہم نے پابندی عائد ہونے کے بعد سے بین الاقوامی پروازوں سے COVID-19 کے مثبت واقعات کی تعداد میں نمایاں کمی دیکھی ہے۔"الغابرا نے کہا کہ حکومت حالات کی تبدیلی کے ساتھ ہی سرحدی پابندیوں کو اپناتے رہیں گی۔ کینیڈا کے ڈپٹی چیف پبلک ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر ہاورڈ نجو (Dr Howard Njoo) نے کہا کہ سفر کی پابندیاں اس لئے اہم ہیں کہ کینیڈا میں تقریبا 70 کروڑ فیصد کورونا وائرس تشویش کے کیس ہیں۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: May 22, 2021 04:19 PM IST