نگروٹا حملہ: دہشت گرد مسعود اظہرکے بھائی سمیت 13 لوگوں کے خلاف چارج شیٹ داخل

این آئی اے کے ترجمان نے ایک بیان میں کہا کہ رنبیرپینل کوڈ، غیرقانونی سرگرمی (روک تھام) ایکٹ اورغیرملکی شہری ایکٹ کے تحت ملزمین کے خلاف چارج شیٹ داخل کی گئی ہے۔

Nov 21, 2018 10:28 AM IST | Updated on: Nov 21, 2018 10:28 AM IST
نگروٹا حملہ: دہشت گرد مسعود اظہرکے بھائی سمیت 13 لوگوں کے خلاف چارج شیٹ داخل

دہشت گرد مسعود اظہر: فائل فوٹو

این آئی اے نے نگروٹا میں فوج کے کیمپ پرحملہ کے معاملے میں مولانا مسعود اظہرکے بھائی اورجیش محمد کے نائب سرغنہ مولانا عبدالروف اصغرسمیت 13 دیگرلوگوں کے خلاف چارج شیٹ داخل کی ہے۔ جموں وکشمیرکے نگروٹا میں ایک آرمی کیمپ میں نومبر2016 میں حملہ ہوا تھا۔

این آئی اے کے ترجمان نے ایک بیان میں کہا کہ رنبیر پینل کوڈ، غیرقانونی سرگرمی (روک تھام) ایکٹ اورغیرملکی شہری ایکٹ کے تحت ملزمین کے خلاف چارج شیٹ داخل کی گئی ہے۔

Loading...

ترجمان نے بتایا کہ جانچ میں اس بات کا انکشاف ہوا کہ ان لوگوں نے بھاری مقدارمیں  ہتھیاروں سے لیس  تین لوگوں کے ایک گروپ کو سانبا کٹھوعہ سے متصل بین الاقوامی سرحد سے جموں کے ہوٹل جگدمبا تک اورپھرنگروٹا تک اپنی گاڑی میں پہنچائی تھی۔

غورطلب ہے کہ پاکستانی جیش محمد کے تین ممبران نے فوج کے کیمپ پریہ حملہ کیا تھا، جس میں 7 فوجی شہید ہوگئے تھے۔ جبکہ تین دیگرزخمی ہوگئے تھے۔ اس حملے کے دوران تینوں دہشت گرد بھی مارے گئے تھے۔ این آئی اے نے کہا ہے کہ اصغرنگروٹا حملے کا سرغنہ تھا۔

یہ بھی پڑھیں:  کشمیر: مسلح تصادم میں مسعود اظہر کے بھتیجے سمیت 2دہشت گرد ہلاک ، ایم 4 اور اے کے 47 رائفلیں برآمد

یہ بھی پڑھیں:  جیش محمد سربراہ مسعود اظہر شدید بیماری میں مبتلا، ایک سال سے بیڈ سے ہلا بھی نہیں: رپورٹ

یہ بھی پڑھیں:  جیش محمد سرغنہ مسعود اظہر کو چین نے پھر بچایا، عالمی دہشت گرد قرار دینے کی تجویز مسترد

Loading...