اپنا ضلع منتخب کریں۔

    چین میں گھریلو قرنطینہ کی اجازت، عارضی لاک ڈاؤن کے خاتمے کا حکم، لیکن...

    دارالحکومت بیجنگ کے ساتھ ساتھ 50 دیگر شہروں نے عوامی مقامات کے لیے ٹیسٹنگ پروٹوکول میں نرمی کا اعلان کیا ہے۔

    دارالحکومت بیجنگ کے ساتھ ساتھ 50 دیگر شہروں نے عوامی مقامات کے لیے ٹیسٹنگ پروٹوکول میں نرمی کا اعلان کیا ہے۔

    سرکاری ذرائع کے مطابق یہ اعلان ایک اہم تبدیلی کی نشاندہی کرتا ہے جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ چین وائرس کے ساتھ رہنا شروع کر سکتا ہے۔ چینی نیشنل ہیلتھ کمیشن (NHC) نے حکام کو عارضی لاک ڈاؤن شروع کرنے سے روکنے کی ہدایت دی ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • China
    • Share this:
      چینی شہروں کے لیے آج یعنی بدھ کے روز کورونا وائرس کی پابندیوں کو ڈھیل دیا گیا جو سخت ’کووڈ زیرو‘ پالیسی کی وجہ سے حکومت سے ناراض ہیں اور کئی دنوں تک چینی عوام نے سڑکوں پر احتجاج بھی کیا ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ کووڈ۔19 سے متاثرہ افراد اب گھر میں قرنطینہ کر سکتے ہیں، لیکن صرف اُن لوگوں کو ہی ایسا کرنے کی اجازت ہو گی جن میں ہلکی یا کوئی علامت نہیں ہے۔

      سرکاری ذرائع کے مطابق یہ اعلان ایک اہم تبدیلی کی نشاندہی کرتا ہے جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ چین وائرس کے ساتھ رہنا شروع کر سکتا ہے۔ چینی نیشنل ہیلتھ کمیشن (NHC) نے حکام کو عارضی لاک ڈاؤن شروع کرنے سے روکنے کی ہدایت دی ہے۔ اس نے پورے چین میں سفر کرنے والے لوگوں کے لیے ٹیسٹنگ اور ہیلتھ کوڈ کی ضروریات کو بھی ختم کر دیا، جس سے لوگ نئے قمری سال کی چھٹیوں کے دورانیے سے پہلے آزادانہ طور پر گھوم پھر سکتے ہیں۔

      اس سے پہلے نہ صرف متاثرہ شخص بلکہ ان کے قریبی افراد بشمول بچوں اور بزرگوں کو ادارہ جاتی قرنطینہ مراکز میں لے جایا جاتا تھا جن پر لوگوں کو ان کی مرضی کے خلاف پکڑنے اور ان قرنطینہ مراکز کے اندر رکھے گئے لوگوں کو مارنے کا الزام بھی عائد کیا گیا تھا۔ این ایچ سی نے ایک بیان میں کہا کہ صحت کی نگرانی کو مضبوط بناتے ہوئے غیر علامات والے افراد اور ہلکے کیسز کو گھر پر الگ تھلگ کیا جا سکتا ہے اور اگر ان کی حالت خراب ہو جاتی ہے تو وہ بروقت علاج کے لیے نامزد اسپتالوں میں منتقل ہو سکتے ہیں۔

      یہ بھی پڑھیں: 

      اسکولوں کو اس وقت تک معمول کے مطابق کام کرنے کی ہدایت کی گئی ہے جب تک کہ کسی بھی وباء کی اطلاع نہ ہو۔ گلوبل ٹائمز نے کہا کہ بیجنگ کے رہائشیوں کو عوامی مقامات جیسے سپر مارکیٹوں، دفتری عمارتوں اور پارکوں میں داخل ہونے سے پہلے منفی آر ٹی ٹیسٹ رپورٹ پیش کرنے کی ضرورت نہیں ہوگی۔

      تاہم انہیں ان جگہوں میں داخل ہونے سے پہلے اپنے ہیلتھ کوڈ کو اسکین کرنا ہوگا۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: