ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

ہندوستان میں پائےجانے والی کورونا وائرس کی قسم کودیاگیاڈیلٹاویرینٹ (Delta Variant) کانام:عالمی ادارہ صحت

ڈبلیو ایچ او نے بتایا کہ B.1.617.2 اسٹرین یا ڈیلٹا اور B.1.617.1 تناؤ یا کاپا دونوں کا پتہ اکتوبر 2020 میں ہندوستان میں پہلی بار لگایا گیا تھا۔ یہ اسٹرین دوسری لہر میں ہندوستان میں کیسوں کا بڑھتا ہوا تناسب ہے۔

  • Share this:
ہندوستان میں پائےجانے والی کورونا وائرس کی قسم  کودیاگیاڈیلٹاویرینٹ (Delta Variant) کانام:عالمی ادارہ صحت
ڈبلیو ایچ او نے بتایا کہ یہ لیبل موجودہ سائنسی ناموں کی جگہ نہیں لیتے ہیں

ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن (World Health Organisation) نے کہا کہ ہندوستان میں پائے جانے والے کووڈ۔19 کی پہلی قسم کو اب 'ڈیلٹا' (Delta Variant) کہا جائے گا جبکہ اس سے پہلے ملنے قسم کو 'کاپا' (Kappa) کے نام سے جانا جائے گا۔یہ نام یونانی حروف (Greek alphabets) کو استعمال کرتے ہوئے وضع کئے گئے ہیں۔ عالمی ادارہ صحت نے کووڈ-19 کی تشویشناک صورت حال (Covid variants of concern) کے لئے ان نئے لیبلوں کا اعلان کیا۔اس ضمن میں ڈبلیو ایچ او کی ٹکنیکل لیڈ ڈاکٹر ماریہ وان کیریخوف (Dr Maria Van Kerkhove) نے کہا کہ ڈبلیو ایچ او نے بتایا کہ یہ لیبل موجودہ سائنسی ناموں کی جگہ نہیں لیتے ہیں، جو اہم سائنسی معلومات پہنچاتے ہیں اور تحقیق میں استعمال ہوتے رہیں گے۔ کسی بھی ملک کو کووڈ کی مختلف حالتوں کا پتہ لگانے اور اس کی اطلاع دینے کے لیے بدنام نہیں کیا جانا چاہئے۔



ڈبلیو ایچ او نے بتایا کہ B.1.617.2 اسٹرین یا ڈیلٹا اور B.1.617.1 تناؤ یا کاپا دونوں کا پتہ اکتوبر 2020 میں ہندوستان میں پہلی بار لگایا گیا تھا۔ یہ اسٹرین دوسری لہر میں ہندوستان میں کیسوں کا بڑھتا ہوا تناسب ہے۔عالمی ادارہ صحت نے پہلے کہا تھا کہ وائرس یا مختلف حالتوں کی شناخت ان ممالک کے ناموں سے نہیں کی جانی چاہئے جن میں وہ پائے گئے تھے۔

ڈبلیو ایچ او نے کہا ہے کہ B.1.617 قسم آفیشئل طور پر 53 علاقوں میں اور غیر آفیشئل طور پر مزید سات علاقوں میں ریکارڈ کیے گئے۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: Jun 01, 2021 08:23 AM IST