ہوم » نیوز » عالمی منظر

انتہائی شرمناک: پاکستان کے لاہور میں پالتو بلی کی ایک ہفتے تک  7لڑکوں نے کی اجتماعی عصمت دری، پار کیں حیوانیت کی ساری حدیں: ویڈیو وائرل

ڈاکٹر کے حوالے سے فیس بک پوسٹ میں بتایا گیا ہے کہ بلی کو جب اسپتال لایا گیا تو اس کی حالت بیحد خراب تھی۔ بھیانک درد کی وجہ بیٹھ بھی نہیں پا رہی تھی، نہ چل پاہی تھی، نہ کھا پی رہی تھی اور نہ ہی سو پارہی تھی۔ بلی کے جسم سے کافی زیادہ ہیومن اسپرم، خون اور پلاسٹک بیگ نکالے گئے۔ ان لڑکوں نے پلاسٹک بیگ کا استعما لکرکے بلی کے ساتھ اس گھنونی اور انتہائی گندی حرکت کو انجام دیا۔

  • Share this:
انتہائی شرمناک: پاکستان کے لاہور میں پالتو بلی کی ایک ہفتے تک  7لڑکوں نے کی اجتماعی عصمت دری، پار کیں حیوانیت کی ساری حدیں: ویڈیو وائرل
ڈاکٹر کے حوالے سے فیس بک پوسٹ میں بتایا گیا ہے کہ بلی کو جب اسپتال لایا گیا تو اس کی حالت بیحد خراب تھی۔ بھیانک درد کی وجہ بیٹھ بھی نہیں پا رہی تھی، نہ چل پاہی تھی، نہ کھا پی رہی تھی اور نہ ہی سو پارہی تھی۔ بلی کے جسم سے کافی زیادہ ہیومن اسپرم، خون اور پلاسٹک بیگ نکالے گئے۔ ان لڑکوں نے پلاسٹک بیگ کا استعما لکرکے بلی کے ساتھ اس گھنونی اور انتہائی گندی حرکت کو انجام دیا۔

پاکستانی (Pakistan)سوشل میڈیا پر ایک فیس بک پوسٹ وائرل (Facebook Post Viral) ہوا ہے جس میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ لاہور (Lahore) کے رہنے والے 15سالہ لڑکے اور اس کے سات دوستوں نے گھر کی پالتو بلی کے ساتھ کا ایک ہفتے تک گینگ ریپ کیا۔ ان لڑکوں کی اس گھنونی حرکت سے بلی کی حالت اتنی خراب ہوگئی کہ اس کے جسم کے حصوں نے کام کرنا بند کردیا۔ دعوے کے مطابق بلی کو اسپتال لے جایا گیا تھا لیکن اسے بچایا نہیں جاسکا۔

جے ایف کے اینیمل ریسکیو اینڈ شیلٹر نام کے فیس بک پیج نے اتوار کو یہ پوسٹ اور بلی کی کچھ تصویریں شیئر کی ہیں۔ اس پوسٹ کو خبر لکھے جانے تک 27 ہزار سے زیادہ لوگ شیئر کرچکے تھے۔ پوسٹ میں بتایا گیا ہے کہ لاہور کے ایک گھر کی پالتو بلی کو اسی گھر میں رہنے والے ایک پندرہ سال کے لڑکے نے اپنے دوستوں کے ساتھ ایک ہفتے تک بار۔بار ہوس کا شکار بنایا۔ بلی کے ساتھ اس حد تک حیوایت کی گئی کہ اس کے حصوں نے کام کرنا بند کردیا اور اس کی موت ہوگئی۔




ڈاکٹر کے حوالے سے فیس بک پوسٹ میں بتایا گیا ہے کہ بلی کو جب اسپتال لایا گیا تو اس کی حالت بیحد خراب تھی۔ بھیانک درد کی وجہ بیٹھ بھی نہیں پا رہی تھی، نہ چل پاہی تھی، نہ کھا پی رہی تھی اور نہ ہی سو پارہی تھی۔ بلی کے جسم سے کافی زیادہ ہیومن اسپرم،  خون اور پلاسٹک بیگ نکالے گئے۔ ان لڑکوں نے پلاسٹک بیگ کا استعما لکرکے بلی کے ساتھ اس گھنونی اور انتہائی گندی حرکت کو انجام دیا۔




فی الحال لڑکوں کے نابالغ ہونے کی وجہ سے پورے معاملے کو دبایا جارہا ہے۔ ڈاکٹر نے بھی بلی کے ریپ کی تصدیق کی ہے لیکن کنٹروورسی کے ڈر سے سامنے آنے سے انکار کردیا ہے۔ پوسٹ میں پاکستان کے اسکولوں میں سیکس ایجوکیشن کی ضرورت کی بھی وکالت کی گئی ہے۔ حالانکہ پاکستان میں قدامت پسند گروپ سیکس ایجوکیشن کے سخت خلاف ہے۔
Published by: Sana Naeem
First published: Jul 28, 2020 06:32 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading