ٹرمپ کا ہلیری کلنٹن پرتیکھا حملہ ، کہا : وزیر خارجہ رہتے ہوئے دہشت گردی کے خلاف مناسب کارروائی نہ کرنے کی وراثت چھوڑ گئیں

ری پبلیکن پارٹی کے صدارتی عہدے کی نامزدگی کو قبول کرتے ہوئے مسٹر ٹرمپ نے اپنی ایک تقریر میں خود کو مزدور طبقے کا دوست بتایا ۔

Jul 22, 2016 05:04 PM IST | Updated on: Jul 22, 2016 05:04 PM IST
ٹرمپ کا ہلیری کلنٹن پرتیکھا حملہ ، کہا : وزیر خارجہ رہتے ہوئے دہشت گردی کے خلاف مناسب کارروائی نہ کرنے کی وراثت چھوڑ گئیں

کلیو لینڈ : امریکہ میں صدارتی عہدے کے انتخابات کےلئے ریپبلیکن پارٹی کے امیدوار ڈونالڈ ٹرمپ نے اپنی ڈیموکریٹک حریف ہلیری کلنٹن کو ہرانے کی اپیل کر تے ہوئے ان پر الزام لگایا ہے کہ وہ وزیر خارجہ رہتے ہوئے دہشت گردی کے خلاف مناسب کارروائی نہ کرنے کی وراثت چھوڑ گئیں۔

ری پبلیکن پارٹی کے صدارتی عہدے کی نامزدگی کو قبول کرتے ہوئے مسٹر ٹرمپ نے اپنی ایک تقریر میں خود کو مزدور طبقے کا دوست بتایا ۔مسٹر ٹرمپ کی تقریر آٹھ نومبر کو ہونے والے صدراتی عہدے کے انتخابات کے پیش نظر محترمہ کلنٹن کےخلاف ان کی تشہیری مہم کی شروعات کےکے طورپر دیکھی جارہی ہے۔

اپنی تقریر میں مسٹر ٹرمپ نے محترمہ کلنٹن پر الزام لگاتے ہوئے کہا کہ مغربی ایشیا میں اربوں ڈالر خرچ کر کے 15سال تک دہشت گردی کے خلاف لڑائی لڑی گئی جس میں ہزاروں لوگوں کی جان بھی گئی ۔اس کےباوجود آج صورت حال پہلے سے بھی بدتر ہے۔انہوں نے سابق وزیر خارجہ کو اسلامک اسٹیٹ کے بڑھتے قدم کلئے ذمہ دار ٹھہرایا ۔

چار روزہ اجلاس کے اختتام کے موقع پر 70سالہ ٹرمپ کا یہ تبصرہ غیر قانونی طور سے امریکہ میں رہ رہے تارکین وطن کے خلاف ان کی بیان بازی پر ریپبلیکن پارٹی میں پھیلی فکروں اور دراروں کو دور کرنے کی کوشش کے طورپر دیکھا جارہا ہے۔ اجلاس کا کئی بڑی شخصیات نے بائی کاٹ کیا جس میں 2012 میں صدارتی عہدے کے امیدوار مٹ رومنی اور بش خاندان کے اراکین شامل ہیں۔

Loading...

Loading...