ہوم » نیوز » عالمی منظر

ایران پر گزشتہ ہفتے حملہ کرنے کی تیاری میں تھے ڈونالڈ ٹرمپ، افسران نے روکا: رپورٹ میں دعویٰ

نیوز ایجنسی رائٹرس نے امریکی افسران کے حوالے سے بتایا کہ صدر ڈونالڈ ٹرمپ (Donald Trump) نے گزشتہ ہفتے ایران پر حملہ کرنے کے متبادل کے بارے میں سوچنے کو کہا تھا۔ حالانکہ افسران نے انہیں روک دیا۔

  • Share this:
ایران پر گزشتہ ہفتے حملہ کرنے کی تیاری میں تھے ڈونالڈ ٹرمپ، افسران نے روکا: رپورٹ میں دعویٰ
ایران پر گزشتہ ہفتے حملہ کرنے کی تیاری میں تھے ڈونالڈ ٹرمپ، افسران نے روکا: رپورٹ میں دعویٰ

واشنگٹن: امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ (Donald Trump) الیکشن ہارگئے ہیں۔ گزشتہ دنوں انہوں نے اس کا اعتراف بھی کیا، لیکن پیر کو پھر ایک فیس بک پوسٹ میں کہہ دیا- ’میں الیکشن جیت گیا’۔ ٹرمپ انتظامیہ آسانی سے جو بائیڈن اور کملا ہیرس کی نئی انتظامیہ کو اقتدار منتقل کرتے ہوئے نہیں نظر آرہی ہے۔ اتنا ہی نہیں ایسا لگ رہا ہے کہ جیسے ٹرمپ مستقبل کی حکومت کی مصیبتیں بڑھانے کے کام میں مصروف ہوگئے ہیں۔ دراصل، ایک امریکی افسر نے دعویٰ کیا ہے کہ ڈونالڈ ٹرمپ نے گزشتہ ہفتے ایران (Iran) کے نیوکلیئر سائٹس پر حملہ کرنے کے متبادل پر سوچنے کے لئے کہا تھا۔ حالانکہ بعد میں یہ ڈرامائی قدم اٹھانے سے انہیں روک دیا گیا۔


افسران نے کہا کہ جمعرات کو قومی سیکورٹی کے معاملوں سے جڑے اپنے معاونین کے ساتھ ایک میٹنگ میں ٹرمپ نے یہ اشارہ دیا۔ اس میٹنگ میں نائب صدر مائیک پینس، ان کے نئے دفاعی سکریٹری کرسٹوفر ملر اور چیئرمین آف جوائنٹ اسٹاف جنرل مارک مل موجود تھے۔ نیوز ایجنسی رائٹرس کی رپورٹ کے مطابق، افسران نے کہا کہ ’انہوں نے متبادل کے بارے میں پوچھا تھا۔ افسران نے انہیں موجودہ حالات کی اطلاع دی اور پھر فیصلہ ہوا کہ اس پر آگے نہیں بڑھا جائے گا’۔


انگریزی اخبار The New York Times (دی نیو یارک ٹائمس) میں اس بابت شائع کی گئی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ڈونالڈ ٹرمپ کو افسران نے ایسا کچھ کرنے سے روکا، کیونکہ اس سے دونوں ممالک کے درمیان تنازعات کا دائرہ مزید بڑھ جاتا۔


انگریزی اخبار The New York Times (دی نیو یارک ٹائمس) میں اس بابت شائع کی گئی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ڈونالڈ ٹرمپ کو افسران نے ایسا کچھ کرنے سے روکا، کیونکہ اس سے دونوں ممالک کے درمیان تنازعات کا دائرہ مزید بڑھ جاتا۔
انگریزی اخبار The New York Times (دی نیو یارک ٹائمس) میں اس بابت شائع کی گئی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ڈونالڈ ٹرمپ کو افسران نے ایسا کچھ کرنے سے روکا، کیونکہ اس سے دونوں ممالک کے درمیان تنازعات کا دائرہ مزید بڑھ جاتا۔


12 گنا بڑھ چکا ہے ایران کا نیوکلیئر بھنڈار

امریکی اخبار کی رپورٹ کے مطابق، چاہے میزائل اٹیک ہو یا پھر سائبر یہ نٹزان پر مرکوز ہوگی۔ اس کے بارے میں بین الاقوامی جوہری توانائی ایجنسی نے بدھ کو رپورٹ دی تھی کہ ایران کے یورینیم بھنڈار اب نیوکلیئر معاہدہ کے تحت اجازت سے 12 گنا بڑھ چکے تھے۔ ایجنسی نے یہ بھی کہا کہ ایران نے کسی دیگر مشکوک جگہ تک جانے نہیں دیا، جہاں پر ملک میں نیوکلیئر پر چل رہے کام کی تاریخ کی اطلاع ہوسکے۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ڈونالڈ ٹرمپ کے دفتر کے آخری دنوں میں ایسا کوئی بھی حملہ منتخب صدر جو بائیڈن کے ساتھ ایران کے رشتوں کو مزید خراب کرسکتا ہے۔ جو بائیڈن نے اقتدار میں لوٹنے کے بعد سال 2015 میں کی گئی ایران نیو کلیئر معاہدہ کو دوبارہ سے نافذ کرنے کا وعدہ کیا ہے۔ ٹرمپ حکومت میں ایسا کوئی بھی حملہ ان کے اس منصوبے پر پانی پھیر سکتا ہے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Nov 17, 2020 09:34 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading